Wednesday , August 23 2017
Home / جرائم و حادثات / حج ہاوز میں مشکوک شخص پکڑا گیا ۔ ملازمین نے پولیس کے حوالے کیا

حج ہاوز میں مشکوک شخص پکڑا گیا ۔ ملازمین نے پولیس کے حوالے کیا

متعلقہ انسپکٹر پولیس کا اظہار لا علمی ۔ سکیوریٹی انتظامات پر سوالیہ نشان
حیدرآباد 5 ستمبر ( سیاست نیوز ) حج ہاوز نامپلی میں آئے دن پیش آرہے واقعات سیکوریٹی پر سوالیہ نشان بن رہے ہیں ۔ حج کیمپ میں موجود پولیس پیکٹ اور عازمین کی خدمات کیلئے بڑی تعداد میں موجود والینٹرس و ملازمین کی کارکردگی و چوکسی پر سوال اٹھ رہے ہیں۔ آج چند افراد نے جو حج ہاوز میں مختلف محکموں میں ملازمت کرتے ہیں ایک ایسے اجنبی شخص کو گرفتار کرلیا جس نے اپنا نام پہلے مسلم ظاہر کیا ۔ اس کی مشکوک حرکتوں اور ایک سے دوسرے مقام پر موجودگی سے ملازمین چوکس ہوگئے اور فوری شبہ کے تحت ان افراد نے اسے پکڑلیا اور نام پوچھا اس کے ساتھ ایک سے دوسرے پر موجودگی اور نقل و حرکت کے بارے میں پوچھ کر ملازمین برہم ہوگئے ۔ تب اس نے اپنا نام وجئے بتایا اور اس کا رویہ مزید مشکوک ہوگیا۔ وقف بورڈ کے ملازمین نے حج ہاوز کے باورچی خانے کے قریب اسے رنگے ہاتھوں پکڑلیا اور پولیس کے حوالے کردیا ۔ حج ہاوز کا علاقہ عابڈس پولیس کے تحت آتا ہے ۔ واقعہ کے دو گھنٹے بعد بھی انسپکٹر عابڈس اس اطلاع سے بے خبر تھے ۔ ایسا لگتا ہے کہ پولیس کو بھی حج ہاوز اور عازمین کی سیکوریٹی سے کوئی دلچسپی نہیں اس خصوص میں عابڈس انسپکٹر پولیس نے خود اس بات کا اعتراف کیا کہ اس واقعہ کی انہیں کوئی اطلاع نہیں ۔ ان کا کہنا ہے کہ ہوسکتا ہے کوئی پاگل شخص ہوگا جس کی جانچ کے بعد پولیس نے اسے چھوڑ دیا ہوگا ۔ چونکہ حج کیمپ کے آغاز کے بعد ہی ایک پاگل شخص کو ایسی حرکت کا واقعہ پیش آیاتھا یہ بات خود انسپکٹر عابڈس بتا رہے ہیں باوجود اس کے سیکوریٹی میں کوئی چوکسی نہیں برتی گئی ۔ پولیس کی مبینہ لاپرواہی عوام میں تشویش کا سبب بنی ہوئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT