Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / حج ہاوز میں کیمپ کے لیے این او سی کی اجرائی

حج ہاوز میں کیمپ کے لیے این او سی کی اجرائی

وقف بورڈ کو ایک لاکھ روپئے جرمانہ ادا کرنے کی ہدایت
حیدرآباد۔/16اگسٹ، ( سیاست نیوز) محکمہ فائر سرویسیس نے حج ہاوز میں کیمپ کے انعقاد کیلئے این او سی کی اجرائی سے اتفاق کرلیا ہے جس کیلئے وقف بورڈ کو ایک لاکھ روپئے بطور چالان ادا کرنے ہوں گے۔ واضح رہے کہ حج ہاوز کی عمارت میں فائر سیفٹی انتظامات نہ ہونے کی محکمہ فائر سرویس نے نشاندہی کی اور جاریہ سال حج کیمپ کے انعقاد سے قبل اس محکمہ نے مقررہ شرائط کی تکمیل پر زور دیا۔ بتایا جاتا ہے کہ حج ہاوز کی تعمیر کے وقت ہی فائر سیفٹی کو نظر انداز کیا گیا اور صرف بعض حصوں میں اس کے انتظامات ہیں۔ عمارت کے دیگر حصوں میں فائر سرویسیس کی توجہ دہانی کے بعد محکمہ اقلیتی بہبود نے ہنگامی منصوبہ تیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اسی دوران عمارت کے استعمال کے سلسلہ میں فائر سرویسیس کا این او سی حاصل کرنے کیلئے عہدیداروں نے ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کی خدمات حاصل کی۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے فائر سرویس کے اعلیٰ عہدیداروں سے ربط قائم کرتے ہوئے این او سی کی اجرائی پر زور دیا۔ بتایا جاتاہے کہ این او سی جاری کرنے کیلئے ایک لاکھ روپئے بطور چالان ادا کرنا ہوگا۔ وقف بورڈ کی جانب سے یہ رقم اندرون 24 گھنٹے جمع کردی جائے گی جس کے بعد فائر سرویسیس سے کلیرنس حاصل ہوجائیگا۔ کیمپ کے دوران فائر سرویس کے حکام نے فائر بریگیڈ تعینات کرنے اور دیگر سہولتوں کی فراہمی سے اتفاق کیا ہے تاکہ کسی ناگہانی صورتحال سے نمٹا جاسکے۔ حیرت تو اس بات پر ہے کہ حج ہاوز کی 10 منزلہ عمارت کی تعمیر کے وقت فائر سیفٹی اقدامات پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔ گذشتہ 14برسوں سے حج کیمپ منعقد ہورہا ہے لیکن جاریہ سال فائر سیفٹی کا مسئلہ منظر عام پر آیا۔

TOPPOPULARRECENT