Saturday , October 21 2017
Home / شہر کی خبریں / حج 2016ء کیلئے تلنگانہ و آندھراپردیش کے عازمین کی قرعہ اندازی

حج 2016ء کیلئے تلنگانہ و آندھراپردیش کے عازمین کی قرعہ اندازی

20 مارچ کو متوقع، مسلم آبادی کے تناسب سے ریاستوں کو حج کوٹہ، پروفیسر ایس اے شکور
حیدرآباد۔/5مارچ، ( سیاست نیوز) حج 2016 کیلئے تلنگانہ اور آندھرا پردیش کے عازمین حج کی قرعہ اندازی توقع ہے کہ 20مارچ کو ہوگی۔ سنٹرل حج کمیٹی نے مختلف ریاستوں کیلئے قرعہ اندازی کی جو تاریخ طئے کی ہے اس کے مطابق تلنگانہ اور آندھرا پردیش کیلئے 20مارچ کا فیصلہ کیا گیا۔ اسپیشل آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ اگر 20 مارچ قطعی تاریخ قرار پاتی ہے تو دونوں ریاستوں کیلئے قرعہ اندازی حیدرآباد میں ہوگی اور ایک ہی دن میں دونوں ریاستوں کے عازمین کا انتخاب کرلیا جائے گا۔ اس سے قبل سنٹرل حج کمیٹی تمام ریاستوں کیلئے حج کوٹہ کا اعلان کرے گی۔ بتایا جاتا ہے کہ 10مارچ کو ہندوستان میں حج کوٹہ کے الاٹمنٹ کے مسئلہ پر سعودی اور ہندوستانی حکام کی بات چیت ہوگی جس میں ہندوستان کیلئے حج کوٹہ طئے کیا جائے گا۔ بعد میں سنٹرل حج کمیٹی مردم شماری 2011 میں مسلم آبادی کے لحاظ سے ریاستوں کو حج کوٹہ مقرر کرے گی۔ اس کوٹہ کے مطابق عازمین حج کا قرعہ اندازی کے ذریعہ انتخاب کیا جائے گا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ جاریہ سال خادم الحجاج کی تعداد میں اضافہ ہوگا کیونکہ مرکزی حکومت نے 200 عازمین کیلئے ایک خادم الحجاج روانہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ گزشتہ سال 300عازمین کیلئے ایک خادم الحجاج کو روانہ کیا گیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ خادم الحجاج کیلئے درخواستیں داخل کرنے کی آخری تاریخ 11مارچ ہے تاہم ابھی تک تلنگانہ سے 35 اور آندھرا پردیش سے 9 درخواستیں داخل کی گئی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ تلنگانہ اور آندھرا پردیش کی تمام درخواستوں کو سنٹرل حج کمیٹی کیلئے ڈاؤن لوڈ کرنے کا کام مکمل ہوچکا ہے۔ تلنگانہ میں جملہ 17321 درخواستیں داخل کی گئیں جن میں فریش درخواستوں کی تعداد 15123ہے جبکہ 2 محفوظ زمروں کے تحت 2198 درخواستیں داخل کی گئیں۔ سب سے زیادہ درخواستیں 11610 حیدرآباد سے داخل کی گئیں جبکہ سب سے کم 208 کھمم سے داخل کی گئیں۔ گزشتہ سال حیدرآباد سے 11219 درخواستیں داخل کی گئی تھیں اور اس سال درخواستوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔ آندھرا پردیش سے جملہ 3250 درخواستیں داخل کی گئیں جن میں فریش درخواستیں 3055اور محفوظ زمروں کے تحت 198 درخواستیں داخل ہوئی ہیں۔ کرنول سے 774 درخواستیں داخل کی گئیں جو آندھرا پردیش کے تمام اضلاع میں سب سے زیادہ ہے۔ سریکاکلم سے صرف 8درخواستیں داخل ہوئی ہیں۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ گزشتہ سال تلنگانہ کا حج کوٹہ 2760تھا جبکہ ویٹنگ لسٹ کے بعد 2969 عازمین حج روانہ ہوئے تھے۔ اسی طرح آندھرا پردیش کا کوٹہ 225تھا تاہم ویٹنگ لسٹ سے تعداد میں اضافہ کے بعد 2404 عازمین حج بیت اللہ کی سعادت کیلئے روانہ ہوئے تھے۔

TOPPOPULARRECENT