Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / حسین ساگر کی صفائی میں نمایاں پیشرفت

حسین ساگر کی صفائی میں نمایاں پیشرفت

کوکٹ پلی نالہ بند کردیا گیا، گندے پانی کا بہاؤ رُک گیا
حیدرآباد 8 مئی (سیاست نیوز) حسین ساگر حیدرآباد کے ماضی کی شان و شوکت بحال ہونے والی ہے۔ کئی دہوں میں پہلی مرتبہ کوکٹ پلی نالہ بند کردیا گیا جہاں سے تقریباً 175 تا 200 ملین لیٹر صنعتی فضلہ اور گندہ پانی حسین ساگر جھیل میں آتا تھا۔ حیدرآباد میٹرو پولیٹن واٹر سپلائی اینڈ سیوریج بورڈ کی طرف سے حسین ساگر آبگیر علاقہ فروغ دینے کے پراجکٹ کے حصہ کے طور پر کوکٹ پلی نالہ کا حسین ساگر میں بہاؤ روکا گیا ہے۔ اس پراجکٹ کو جاپان انٹرنیشنل کوآپریٹنگ ایجنسی کی مالیاتی مدد حاصل ہے۔ برسوں پہلے حسین ساگر شہر کو پینے کے پانی کا ذریعہ تھا۔ اب عظمت رفتہ بحال کرنے کی سمت اہم اقدام کیا گیا ہے۔ کوکٹ پلی نالہ کے پانی کا بہاؤ حسین ساگر کی طرف روکنے کے بعد سے اب حسین ساگر کے پانی کا معیار بہتر ہوگا۔ بانک پور نالہ بنجارہ تالہ اور پکٹ نالہ سے بھی گندہ پانی حسین ساگر میں آتا ہے۔ ایک سو دن کے ایکشن پلان کے تحت تین سیوریج ٹریٹمنٹ پلانٹ قائم کئے گئے ہیں ان میں سے دو خیریت آباد فلائی اوور کے قریب اور ایک منسٹرس روڈ پر تعمیر کئے گئے ہیں۔ اس کا مقصد گندے پانی کی صفائی کرنا اور حسین ساگر میں آلودگی کی سطح کم کرنا ہے۔

TOPPOPULARRECENT