Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / حصول اراضی قانون کے نفاذ میں ریاستوں کو اختیارات ضروری

حصول اراضی قانون کے نفاذ میں ریاستوں کو اختیارات ضروری

ریاستوں کو ان کا اپنا قانون بنانے کی اجازت دی جائے، چندر شیکھر راؤ کا بیان
حیدرآباد۔/12اگسٹ ، ( پی ٹی آئی) پارلیمنٹ میں حصول اراضی بل پر پائے جانے والے تعطل کے پس منظر میں چیف منسٹر تلنگانہ کے چندر شیکھر راؤ نے آج کہا کہ حصول اراضی قوانین کے نفاذ کیلئے ریاستوں کو بھی اختیار دیا جانا چاہیئے۔ چیف منسٹر نے کنفیڈریشن آف انڈین انڈسٹری کی جانب سے منعقدہ ایک مشاورتی سیشن کے دوران کہا کہ اراضی مسائل کیلئے ریاستوں کو ان کا اپنا قانون بنانے کی اجازت دینا بہتر ہوگا۔ ریاستوں کو یہ اختیار دیا جائے کہ وہ حصول اراضی کیلئے خود اپنا قانون بنائیں۔ ان کی ضرورت کے مطابق ریاستیں قانون بناسکتی ہیں۔ ہم نے مرکزی حکومت سے بھی یہی کہا ہے اور توقع کرتے ہیں کہ مرکز سے مثبت جواب ملے گا۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ حکومت نے تلنگانہ ریاست کو اناج پیدا کرنے والا مرکزی مقام بنانے کا عہد کرلیا ہے۔ تلنگانہ کو بہتر پیداواری ریاست بنایا جائے گا۔ تلنگانہ ریاست ماحولیاتی تبدیلی، بارش اور زرخیز زمین کی حامل ریاست ہے۔ ہم نے کاشتکاری کیلئے 500کروڑ روپئے مختص کئے ہیں۔ آئندہ تین تا چار سال کے دوران بڑے آبپاشی پراجکٹس کو مکمل کرلیا جائے گا۔ تلنگانہ ریاست ملک کی سب سے بہترین زرعی ریاستوں میں سے ایک ہے ۔ چیف منسٹر نے لیبر مسائل کی یکسوئی کیلئے صنعتی گھرانوں سے تجاویز پیش کرنے کی خواہش کی۔ انہوں نے کہا کہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن شہر میں 21000 کروڑ لاگتی انفراسٹرکچر پراجکٹس کو شروع کرنے کا منصوبہ بنارہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT