Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / حصول تعلیم کے بغیر ترقی نا ممکن ، علم سے اجتماعی ترقی

حصول تعلیم کے بغیر ترقی نا ممکن ، علم سے اجتماعی ترقی

عبداللہ عبدالکریم کی سی بی ایس ای میں شاندار کامیابی ، بائیو لوجسٹ بننے کا عزم
حیدرآباد۔25مئی (سیاست نیوز ) تعلیم کے حصول میں دلچسپی ہو اور ہمت و حوصلہ کے ساتھ منزل کے حصول کی راہ پر گامزن رہیں تو کوئی طاقت کامیابی سے نہیں روک سکتی۔ تعلیم کے حصول کے بغیر ترقی ممکن نہیں ‘اسی لئے حصول علم پر توجہ مرکوز کرنی چاہئے تاکہ اجتماعی ترقی کو یقینی بنایا جا سکے۔ شہر حیدرآباد کے ایک تجارتی گھرانے سے تعلق رکھنے والے نوجوان عبداللہ عبدالکریم فرزند جناب عبدالکریم جو کہ پی اوبل ریڈی پبلک اسکول کے طالبعلم ہیں نے سی بی ایس سی میں اعلی و امتیازی کامیابی حاصل کرتے ہوئے یہ ثابت کر دیا کہ انسان اگر طئے کر لے تو وہ ضرور کامیابیوں کی بلندیوں پر پہنچ سکتا ہے۔عبداللہ عبدالکریم نے CBSEمیں 12ویں جماعت کے امتحانات میں 96فیصد سے کامیابی حاصل کرتے ہوئے شہری سطح پر معیاری کامیابی حاصل کی ہے۔ پی اوبل ریڈی پبلک اسکول میں داخلہ حاصل کرنے سے قبل ودیا رنیہ ہائی اسکول کے طالبعلم رہ چکے ہیں۔12ویں جماعت میں سائنس اسٹریم میں 96فیصد نشانات حاصل کرتے ہوئے کامیابی حاصل کرنے والے عبداللہ کا کہنا ہے کہ وہ بائیو لوجسٹ بننا چاہتے ہیں اور وہ اپنے مقصد کے حصول پر ہی توجہ مرکوز کئے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ سخت محنت و جستجو کے ذریعہ ہی کامیابی ممکن ہو سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ والدین کی خواہش کے مطابق انہوں نے اپنی کوشش کی ہے اور اس کے جو نتائج برآمد ہوئے ہیں وہ حوصلہ افزاء ہونے کے باعث وہ اپنا سلسلہ تعلیم جاری رکھناچاہتے ہیں۔ انہوں نے اپنی کامیابی کو والدین کی دعاؤں کا نتیجہ قرار دیا۔ شہر حیدرآباد و سکندرآباد میں جملہ 122سی بی ایس سی ملحقہ مدارس ہیں جن میں تعلیم حاصل کرنے والے70فیصد طلبہ نے اعلی نشانات سے کامیابی حاصل کی ہے۔ دونوں شہروں میں سب سے زیادہ96فیصد نشانات حاصل کرتے ہوئے عبداللہ عبدالکریم کے علاوہ پی اوبل ریڈی پبلک اسکول کے ہی رشابن جین شامل ہیں اس طالبعلم نے بھی 96فیصد نشانات حاصل کئے ہیں۔

 

حیدرآباد انسٹی ٹیوٹ آف ایکسیلنس کے 6طلباء
ایم بی بی ایس میں داخلہ کے اہل
حیدرآباد۔ 25 مئی (پریس نوٹ) حیدرآباد انسٹی ٹیوٹ آف ایکسیلنس کے چھ طلباء نے ایمسیٹ 2016ء میں شاندار کامیابی حاصل کرتے ہوئے ایم بی بی ایس میں داخلہ کا استحقاق حاصل کرلیا۔ چار طلباء زاہد شیخ، دادا اویس، رمیض سوداگر اور شیخ محمود کا تعلق HIE کے 2015-16بیاچ سے ہے جب کہ دو طلباء شیخ محمد نثار اور پی والنورولی 2014-16بیاچ سے تعلق رکھتے ہیں ۔ جناب غیاث الدین بابو خان کی زیر سرپرستی حیدرآباد انسٹی ٹیوٹ آف ایکسیلنس کے طلباء نے حال ہی میں انٹرمیڈیٹ میں جہاں صدفیصد امتیازی کامیابی حاصل کی وہیں چار طلباء نے اسٹیٹ رینک حاصل کیا۔ 12طلباء نے JEE Mains میں کوالیفائی کیا۔ جناب ہدایت اللہ ڈین کی نگرانی میں حیدرآباد انسٹی ٹیوٹ آف ایکسیلنس جو ایک عالمی معیار کا ریزیڈنشیل کیمپس ہے تعلیم کے ساتھ ساتھ اسپورٹس سرگرمیوں میں بھی غیر معمولی کامیابی حاصل کررہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT