Wednesday , August 16 2017
Home / اضلاع کی خبریں / حصول علم دین میں ہی امت مسلمہ کی دونوں جہاں کی کامیا بی مضمر

حصول علم دین میں ہی امت مسلمہ کی دونوں جہاں کی کامیا بی مضمر

سنگاریڈی منڈل کے موضع کندی میں مدرسہ احسن العلوم کے افتتا حی جلسہ سے مولانا عبد القوی کا خطاب
سنگاریڈی28 ؍جولائی(سیا ست ڈسٹرکٹ نیوز) حصول علم دین میں ہی امت مسلمہ کی دونوں جہاں کی کامیابی مضمر ہے علم دین ایک روشنی ہے علم دین انسان کو اخلاق و آداب ‘ تہذیب و تمدن ‘ دور اندیشی و دور بینی سے مزین کرتا ہے ۔ اچھے اور برے کی تمیز ‘ حلال و حرام کی پہچان عطاء کرتا ہے اسی علم دین کے ناہونے کی وجہ سے جو برائیاں منظر عام پر آرہی ہیں وہ امت مسلمہ پر عیاں و بیاں ہیں لہذا دور حاضر میں عصری علوم کے ساتھ سا تھ نسل نو کو دینی علوم سے آراستہ کرنا بیحد ضروری ہے ۔ ہر خاندان کے ذمہ داران سے میری گذارش ہیکہ کم از کم ایک بچے کو حافظ قرآن اور عالم دین بنانے کیلئے مستقل فارغ کر دیں تا کہ وہ دینی امور میں خاندان کی رہبری و رہنمائی کر سکے ان خیالات کا اظہار مولانا محمد عبد القوی ناظم مدرسہ اشرف العلوم حیدرآباد نے سنگاریڈی منڈل کے مو ضع کندی میں اقراء و یلفیرسوسائٹی کے زیر اہتمام منعقدہ مدرسہ احسن العلوم کے افتتا حی جلسہ سے خطاب کر تے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ آج سے 25 سال پہلے جن برائیوں کو معیوب سمجھا جا تا تھا آج ان کو باعث فخر سمجھا جارہا ہے دین بیزاری کا یہ عالم بن گیا ہیکہ بے حیائی و عریانیت معیار عقل مندی و مالداری سمجھا جارہا ہے ۔ اور بین مذہبی شا دیوں کو وسعت ذہنی و اعلی ظرفی تصور کیا جا رہا ہے والدین سے خصوصی گذارش کر تے ہوئے مولانا نے کہا کہ اپنے بچوں پر خصوصی نظر رکھیں انہیں مکا تب‘ دینی مدارس اور اللہ والوں کی صحبت سے جوڑے رکھیں ۔ مولانا قاری شمیم احمد مہتمم مدرسہ دارالسلام روڑ کی ضلع ہر دوار ریاست اتر کھنڈ نے کہا کہ روئے زمین پر سب سے بہتر انسان وہ ہے جو قرآن سیکھے اور سکھائے جب قرآن مجید کی تعلیمات زندگیوں میں آئینگی تو اس کی برکتوں کا ظہور عمل میں آئیگا۔جس شہر‘ مو ضع‘ بستی‘ اور محلہ جات میں قرآن مجید کی تعلیم دی جاتی ہے اسی بستی پر اللہ تبا رک تعالی اپنا خصوصی فضل و کرم فرماتا ہے قرآن مجید کی تعلیمات سے آراستہ ہونے والوں کو اللہ تعالی اپنی قدرت سے رزق عطاء کرتا ہے مولانا نے اہلیان کندی و اطراف واکناف کے مواضعات کے مسلمانوں سے اپنے بچوں کو مدرسہ احسن العلوم میں داخل کرنے خواہش کی اور اپنے عطیات ‘ صدقات وخیرات و زکوۃ کے علاوہ اپنی محبتو ں و دعائوں سے تعائون کرنے کی اپیل کی مفتی محمد اسلم سلطان قا سمی ناظم مدرسہ عربیہ نعمانیہ سنگاریڈی نے کہا کہ دینی مدارس ایثار و محبت ‘ امن وامان ‘ اخوت و بھا ئی چارگی کی  علا مت و پہچان ہو تے ہیں یہاں سے انسانیت کا پیغام ملتا ہے آپسی اتحاد و اتفاق کا درس عظیم دیا جا تا ہے دینی مدارس اسلام کے مضبو ط قلعے ہیں یہاں پر اسلام کے سپا ہی اور دین کے محافظ پیدا ہو تے ہیں مدارس کا بنیادی مقصد اللہ اور رسول ﷺ ‘ صحابہ و تا بعین اور اولیاء کرام کی تعلیمات کو دنیا میںعام کرنا ہے لہذا دینی مدارس کی آبیاری ‘مالی مدد و تعائون ہمارا دینی و ملی فریضہ ہے مولوی محمد زبیر شریف قا سمی نے بھی خطاب کیا مولانا محمد اعجاز الدین قا سمی کی قرا ء ت کلام پاک سے جلسہ کا آغاز ہوا مولانا محمد سلما ن نے ہد یہ نعت شریف پیش کرنے کی سعادت حاصل کی مفتی محمد فیاض الدین قا سمی ناظم مدرسہ احسن العلوم مو ضع کندی نے نظا مت کے فرائض انجام دیئے اس مو قع پر اقراء ویلفیر سوسائٹی صدر محمد اسما عیل خاں‘ نائب صدر عبداللہ قریشی ‘ سکریٹری خواجہ معین الدین ‘ جنرل سکریٹری محمد حبیب الدین اور جامع مسجد کندی کے اراکین سید میراں دادر‘محمد خواجہ خاں‘محمد نعمت خان‘ محمد فصیح الدین ‘ سید بشیر الدین ‘ محمد خواجہ قریشی‘ محمد جمال الدین کے علاوہ مولانا محمو د پٹیل قاسمی ریاستی جنرل سکریٹری جمیعت العلماء ‘ مولانا محمد حشمت علی ناظم مدرسہ اشا عت العلوم‘ مولانا سید فصیح الدین قا سمی صدر جمیعت العلماء سنگاریڈی‘مولانا محمد عظیم ‘ مولانا محمد سمیع الدین قا سمی ‘ حافظ تنویر ‘ محمد عبد الحمید عرف با با جانی ‘ایم اے ۔ حکیم ایڈو کیٹ ‘ ایم اے سبحان سابق رکن بلدیہ ‘ایم اے ۔ مبین‘احمد اللہ حسینی ‘ محمد لیاقت علی ‘محمد عامر خان ‘ محمد عمران ‘ محمد مجا ہد ‘ محمد خواجہ و دیگر اہلیان کندی کی کثیر تعداد موجود تھی۔

TOPPOPULARRECENT