Tuesday , April 25 2017
Home / مذہبی صفحہ / حضرت نبی کریم ﷺ کاخطبہ جمعے کے دن

حضرت نبی کریم ﷺ کاخطبہ جمعے کے دن

مرسل : ابوزہیر نظامی

یہاں حضرت نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کا خطبہ اس غرض سے نقل کیا جاتا ہے کہ خطبہ کا اسلوب اور طریقہ معلوم ہوسکے۔ اگر عام مسلمانوں کی ہدایت و نصیحت نیز تبرک و اتباع کے خیال سے کبھی اس مبارک خطبہ کو پڑھ لیں یا اس کے مقدس الفاظ کو اپنے خطبہ میں شامل کرلیں تو بھی مناسب ہے ۔
عادت شریف یہ تھی کہ جب سب لوگ جمع ہوجاتے اس وقت آپ مسجد میں تشریف لاتے (درآنحالیکہ آپ کے آگے کوئی چوبدار پکارتا نہ کسی خاص وضع کا لباس ہوتا ) اور حاضرین کوسلام کرتے پھر منبر پر چڑھ کرلوگوں کی طرف متوجہ ہوتے اور پھر سلام کرتے اور بیٹھ جاتے اور فوراً خطبہ شروع فرما دیتے ( اذان اور خطبے میں کچھ فصل نہ ہوتا تھا ) حالت خطبہ میں لوگوں کو نزدیک ہونے کا ارشاد ہوتا ۔ دو خطبے پڑھتے اور دونوں خطبوں کے درمیان ذراسی دیر بیٹھ جاتے اور اس وقت کچھ کلام نہ فرماتے نہ دعا مانگتے ۔ جب دوسرے خطبہ سے فراغت ہوتی ‘ حضرت بلال رضی اللہ عنہ اقامت کہتے اور آپ نماز شروع فرما دیتے ۔ اکثر نماز جمعہ کی پہلی رکعت میں سورہ جمعہ اور دوسری میں سورہ منافقون اور کبھی پہلی میں سَبِّحِ اسْمَ رَبِّکَ الْاَعْلٰی اور دوسری میں ھَلْ اَتٰـکَ حَدِیْثُ الْغَاشِیَۃِ پڑھتے ۔ خطبہ مختصر پڑھتے تھے اور نماز طویل ادا فرماتے تھے ۔ خطبہ پڑھتے وقت حضرت کی آواز بلند ہوجاتی تھی اور مبارک آنکھیں سرخ ہوجاتی تھیں ۔ حدیث شریف سے ثابت ہے کہ خطبہ پڑھتے وقت حضرت کی حالت ایسی ہوتی تھی جیسے کوئی شخص کسی دشمن کے لشکر سے ( جو عنقریب صبح یا شام آیا چاہتا ہو) اپنے لوگوں کو خبردار کرے ۔ اکثر خطبے میں بیچ کی انگلی اور شہادت کی انگلی کو ملادے کر فرمایا کرتے تھے ’’ بُعِثْتُ اَنَا وَ السَّاعَۃُ کَھَاتَیْنِ ‘‘ (میں اور قیامت اس طرح بھیجا گیا ہوں جیسے یہ دو انگلیاں )
۸۔نماز جمعہ کے احکام : (۱) جمعہ کے دن بجائے چار رکعت نماز ظہر کے دو رکعت نماز جمعہ فرض ہے ۔ (۲) فرض جمعہ کے پہلے چار پھر فرض کے بعد چار اس طرح جمعہ کی آٹھ رکعتیں سنت موکدہ ہیں ۔ (۳) چار رکعت سنت بعد الجمعۃ کے بعد پھر دو رکعت پڑھنا مستحب ہے ۔ (۴) اگر کوئی شخص خطبہ پڑھتے وقت آئے تو وہ چار رکعت سنت قبل الجمعۃ نہ پڑھے بلکہ خطبہ سننے میں مشغول ہوجائے اور فرض جمعہ کے بعد ان سنتوں کو ادا کرلے ۔ (۵) نماز جمعہ کی نیت یہ ہے ۔ ’’نَوَیْتُ اَنْ اُصَلِّیَ رَکْعَتَیِ الْفَرْضِ صَلَاۃَ الْجُمُعَۃِ خَالِصًا لِلّٰہِ تَعَالیٰ مُتَوَجِّھًا اِلیٰ جِھَۃِ الْکَعْبَۃِ الشَّرِیْفَۃِ ‘‘ (دو رکعت فرض نماز جمعہ پڑھتا ہوں خاص اللہ تعالیٰ کے لئے منہ طرف کعبہ شریف کے ) ۔ (نصاب اہل خدمات شرعیہ، حصہ پنجم)

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT