Friday , June 23 2017
Home / دنیا / حلب میں باغیوں کے علاقہ سے 3000 افراد کا تخلیہ

حلب میں باغیوں کے علاقہ سے 3000 افراد کا تخلیہ

بیروت ۔ 19 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ  کام) شام کے شہر حلب کے ایسے آخری علاقہ میں جہاں باغیوں کا قبضہ ہے، وہاں سے تقریباً3000  افراد کا تخلیہ کروایا گیا ہے جبکہ اس کام میں تاخیر کی وجہ سے یہ لوگ کافی پریشان ہے۔ تخلیہ ٹم کے ساتھ تعاون کرنے والی ڈاکٹروں کی ٹیم کے سربراہ ڈاکٹر احمد نے بتایاکہ تقریباً 20 بسوں میں سوار ہوکر لوگ حلب سے یہاں پہنچے ہیں جبکہ صرف دو گھنٹے بعد مزید 25 بسوں میں سوار پناہ گزینوں کی کثیر تعداد یہاں پہنچی ہے اور اس طرح ان کی تعداد 3000 ہوچکی ہے۔ انہوں نے بسوں کے ذریعہ حلب سے آنے والے افراد کی حالت زار پر افسوس کیا۔ شدید سردی کی وجہ سے ہر ایک فرد سوئٹر، مفلر اور کوٹ میں ملبوس تھا یعنی محض ایک سوئٹر پہننے سے سردی سے تحفظ مشکل تھا۔ وہاں پہنچتے ہی انہیں غذائی پیاکٹس اور پانی دیا گیا۔ زائد از 30 بسیں مسافروں سے کھچاکھچ بھری ہوئی تھیں اور وہ لوگ حلب سے نکلنے کیلئے خون منجمد کرنے والی سردی میں ٹھٹھر رہے تھے جن کا تخلیہ ایک پیچیدہ سودے کے ذریعہ کیا گیا۔ اسی دوران سیرین آبزرویٹری برائے ہیومن رائٹس نے بتایا کہ روس اور ترکی کی جانب سے ان کے چیک پوائنٹس سے آخری بار پانچ بسوں کو گذرنے کی اجازت دینے کے بعد صرف 350 افراد ہی وہاں سے نکلنے میں کامیاب ہوئے ہیں جبکہ دیگر بسوں کی روانگی تاخیر کا شکار ہوئی۔ برطانیہ کی اس آبزرویٹری نے مزید بتایا کہ فعا اور کفرایہ سے پیر کے روز تک صرف 500 افراد کا تخلیہ کروایا گیا ہے جو 10 بسوں میں سوار ہیں جو حلب میں سرکاری کنٹرول والے علاقوں کی جانب بڑھ رہے ہیں۔ آبزرویٹری کے سربراہ عبدالرحمن نے یہ بات بتائی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT