Saturday , July 22 2017
Home / شہر کی خبریں / حکومت تلنگانہ کے رمضان گفٹ پیاکٹس کی روانگی

حکومت تلنگانہ کے رمضان گفٹ پیاکٹس کی روانگی

ریاست کے مساجد کمیٹیوں کو روانہ ، جناب الحاج محمد سلیم نے جھنڈی دکھائی
حیدرآباد ۔ 13۔ جون (سیاست نیوز) صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم نے آج حکومت کی جانب سے رمضان المبارک کے موقع پر مساجد میں غریب مسلمانوں کو دیئے جانے والے رمضان گفٹ پیاکٹس مساجد کمیٹیوں کو جاری کئے ۔ انہوں نے ایل بی نگر اسمبلی حلقہ کی مساجد کے گفٹ پیاکٹس کی گا ڑی کو جھنڈی دکھاکر روانہ کیا۔ انہوں نے اس موقع پر حج ہاؤز میں مختلف مساجد کی سہولت کیلئے قائم کئے گئے کاؤنٹرس کا معائنہ کیا گیا اور گفٹ پیاکٹس کی اجرائی کا جائزہ لیا ۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے محمد سلیم نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے جاریہ سال دو لاکھ غریب مسلمانوں کو عید کی خوشیوں میں شامل کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ ہر مسجد کے تحت 500 گفٹ پیاکٹس کی تقسیم عمل میں آئے گی اور ہر پیاکٹ میں ایک ساڑی ، کرتا پائجامہ اور شرٹ شلوار رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر غریب پرور ہیں اور وہ چاہتے ہیں کہ رمضان المبارک کی خوشیوں میں غریبوں کو بھی حکومت کی جانب سے شامل کیا جائے ۔ 16 جون کو گریٹر حیدرآباد کی 420 اور اضلاع کی 380 جملہ 800 مساجد میں گفٹ پیاکٹس کی تقسیم عمل میں آئے گی ۔ انہوںنے کہا کہ چیف منسٹر سے نمائندگی کرتے ہوئے وہ آئندہ سال مساجد کی تعداد میں اضافے کی کوشش کریں گے تاکہ زیادہ سے ز یادہ غریب خاندانوں میں گفٹ پیاکٹس تقسیم کئے جاسکیں۔ انہوں نے کہا کہ 18 جون کو چیف منسٹر کی دعوت افطار کے دن ریاست کی منتخب مساجد میں اجتماعی دعوت افطار اور طعام کا انتظام کیا جائے گا۔ ہر مسجد میں 500 افراد کیلئے کھانے کا نظم رہے گا اور مساجد کمیٹیوں کو وقف بورڈ کی جانب سے ایک لاکھ روپئے جاری کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ کی تشکیل کے بعد سے چیف منسٹر نے غریبوں کی بھلائی کیلئے کئی قدم اٹھائے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ تلنگانہ کے مسلمان پوری طرح کے سی آر کے ساتھ ہیں۔ اسی دوران حکومت کے مشیر برائے ا قلیتی امور اے کے خاں اور سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے حج ہاؤز کا دورہ کرتے ہوئے گفٹ پیاکٹس کی مساجد کمیٹیوں کو اجرائی کا معائنہ کیا۔ انہوں نے مساجد کمیٹیوں کے ذمہ داران سے ملاقات کرتے ہوئے مقررہ تاریخ پر گفٹ پیاکٹس کی تقسیم کا مشورہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کی نیت کے اعتبار سے غریب اور مستحکم خاندانوں میں گفٹ پیاکٹس تقسیم کئے جانے چاہئے ۔ بعض مساجد کمیٹیوں نے نمائندگی کی کہ کمیٹی کا بینک اکاؤنٹ نہیں ہے اور نیا بینک اکاؤنٹ کھولنے کیلئے آدھار کارڈ لازمی کردیا گیا ہے ۔ مسجد کے نام پر آدھار کارڈ نہیں ہوتا ، لہذا اکاؤنٹ کی کشادگی میں دشواری ہورہی ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ ایسی مساجد کے کمیٹی صدر کے اکاؤ نٹ میں رقم جمع کی جائے اور ان سے اس سلسلہ مکتوب حاصل کیا جائے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT