Sunday , April 30 2017
Home / اضلاع کی خبریں / حکومت وعدوں کی تکمیل میں ناکام ، طلبہ کا مستقبل داؤ پر

حکومت وعدوں کی تکمیل میں ناکام ، طلبہ کا مستقبل داؤ پر

مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات کی عدم فراہمی پر تنقید : ریونت ریڈی

بانسواڑہ ۔ /7 مارچ (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) بانسواڑہ آر ٹی سی ڈپو کے روبرو ایک میدان میں تلگودیشم پارٹی کا عظیم الشان جلسہ منعقد ہوا جس میں سینکڑوں عوام نے شرکت کی ۔ اس جلسہ سے صدر تلنگانہ ورکنگ تلگودیشم پارٹی ریونت ریڈی نے حکومت تلنگانہ چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اپنے کئے گئے انتخابات میں تمام عوامی وعدے پورے نہیں کئے ۔ عوام سے جھوٹ بولکر ووٹ حاصل کئے ۔ چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ عوام کو صرف گمراہ کرتے ہوئے اپنے خاندان کی دوکان چلارہے ہیں ۔ چیف منسٹر دھوکہ دہی میں سرفہرست ہیں ۔ کے سی آر نے ٹی آر ایس کے انتخابی منشور میں کئی اہم وعدے کئے ۔ جس میں ڈبل بیڈروم مکانات ، کے جی تا پی جی مفت تعلیم ، ہر گھر میں ایک کو ملازمت ، کسانوں کے قرضہ جات کی معافی ، دلتوں میں فی کس تین ایکڑ اراضی کی تقسیم ، مسلمانوں اور قبائیلی طبقات کیلئے 12 فیصد تحفظات کی فراہمی شامل ہیں ۔ معذورین ، معمرین اور بیواؤں کو وظیفے کے عوام کو دوسرا کوئی فائدہ نہیں ہوا یہ بھی نام نہاد بن کر رہ گیا ۔ گزشتہ دو سال سے جس ری ایمبرسمنٹ اسکیم کے 3600 کروڑ روپئے کے بقایہ جات جاری نہیں کئے گئے جس کی وجہ سے 14 لاکھ طلبہ کا تعلیمی مستقبل داؤ پر لگا ہوا ہے جس کے لئے طلبہ کو تعلیم کے بجائے سڑکوں پر احتجاج کرنا مجبور ہوگیا ۔ آج فنڈس کی وجہ سے کالج انتظامیہ مالی بحران کا شکار ہے ۔ راجیو آروگیہ شری اسکیم کے بقایہ جات کی بھی اجرائی نہ ہونے سے خانگی کارپوریٹ ہاسپٹل نے غریب عوام کا علاج روک دیا ۔ جبکہ آبپاشی پراجکٹس کے نام پر کروڑوں روپئے غبن کئے جارہے ہیں ۔ کئی ماہ سے دوسری طرف وزراء صرف اپنے آبائی وطن میں ہی ڈبل بیڈروم مکانوں کی تعمیر میں فکر مند ہے ۔ مسلمانوں کو صرف رمضان کے ماہ میں افطار پارٹی دے کر خوش کردیا جارہا ہے جبکہ مسلمانوں سے کئے وعدہ آج بھی ادھورے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نظام شوگر فیاکٹری کو دوبارہ بحال کیا جائے ۔ نوجوان بے روزگاری سے پریشان ہیں ۔ میناریٹی لون دینے کا وعدہ بھی ادھورہ اگر میناریٹی قرضہ مل بھی رہا ہو تو وہ بھی ٹی آر ایس قائدین اس کا فائدہ اٹھارہے ہیں جبکہ میناریٹی قرضہ کا حقدار قرض لینے سے محروم ہورہا ہے ۔ اس موقع پر سابقہ رکن اسمبلی مانڈوا وینکٹیشور راؤ ڈچپلی ، اے نرساریڈی نظام آباد ، اناپورنا ، امرناتھ بابو ، ملیا ، محمد عثمان ، گوپال ریڈی ، بانسواڑہ تلگودیشم پارٹی حلقہ انچارج بدیا نائیک ، شیخ اکبر ، محمد شمس الدین اور عوام کی کثیر تعداد موجود تھی ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT