Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / حکومت پر مسلم تحفظات کیلئے دباؤ ڈالنے وِدیا یاترا

حکومت پر مسلم تحفظات کیلئے دباؤ ڈالنے وِدیا یاترا

انتخابی وعدہ کی تکمیل کا مطالبہ ، عنقریب اجلاس کی طلبی ، کودنڈا رام کا بیان
حیدرآباد۔/12جنوری، ( سیاست نیوز) صدرنشین تلنگانہ جے اے سی پروفیسر کودنڈا رام نے کہا کہ مسلم تحفظات کے مسئلہ پر بہت جلد اجلاس طلب کیا جائے گا جس میں سدھیر کمیشن آف انکوائری کی سفارشات کا جائزہ لیتے ہوئے مسلمانوں سے کئے گئے انتخابی وعدہ کی تکمیل کا مطالبہ کیا جائے گا۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے پروفیسر کودنڈا رام نے کہا کہ سدھیر کمیشن نے مسلمانوں کی تعلیمی، معاشی اور سماجی صورتحال پر حکومت کو تفصیلی رپورٹ پیش کی ہے جس میں کئی اہم سفارشات کی گئیں۔ کودنڈا رام نے کہا کہ مسلمانوں کی پسماندگی کی بنیاد پر انہیں تحفظات ضروری ہیں اور مختلف شعبہ کے ماہرین کے ساتھ اجلاس طلب کرتے ہوئے جے اے سی اس مسئلہ کا جائزہ لے گی۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ میں طلبہ کو درپیش مختلف مسائل کے سلسلہ میں ودیا یاترا کا اہتمام کیا جائے گا جس کے ذریعہ طلبہ کے مسائل کی یکسوئی کے سلسلہ میں حکومت پر دباؤ بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ طلبہ اسکالر شپ، فیس باز ادائیگی سے محروم ہیں اور انہیں حکومت نے انتخابات سے قبل جو وعدے کئے تھے ان پر بھی عمل آوری نہیں کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ نئی ریاست تلنگانہ میں نوجوانوں کو امید تھی کہ انہیں روزگار کے مواقع حاصل ہوں گے لیکن حکومت نے نئے روزگار کے مواقع پیدا کرنے کیلئے کوئی اقدامات نہیں کئے جس کے باعث طلبہ میں بے چینی پائی جاتی ہے۔ کودنڈا رام نے حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت ترقی کے جو دعوے کررہی ہے وہ کوکھلے ہیں۔ ترقی کے حصول کیلئے حکومت نے جو طریقہ کار اور راستہ اختیار کیا ہے اس سے ترقی ممکن نہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کے پاس دعووؤں کے علاوہ کچھ نہیں، عوام کے مسائل جوں کے توں برقرار ہیں۔ کودنڈا رام نے نظام شوگر فیکٹری کے ملازمین کی تنخواہوں کے بقایا جات فوری ادا کرنے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت سنگارینی کالریز کے بارے میں بلند بانگ دعوے کررہی ہے۔ گذشتہ دنوں چیف منسٹر نے دعویٰ کیا کہ سنگارینی کالریز میں کنٹراکٹ ملازمین موجود نہیں۔ چیف منسٹر کا یہ دعویٰ حقائق سے بعید ہے۔ انہوں نے کہا کہ سنگارینی کالریز میں اوپن کاسٹ کانوں اور ان کے ورکرس کے مسائل پر اجلاس منعقد کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT