Saturday , June 24 2017
Home / سیاسیات / حکومت کی ناکامیوں کو بے نقاب کرنے ملک گیر مہم ‘ کانگریس

حکومت کی ناکامیوں کو بے نقاب کرنے ملک گیر مہم ‘ کانگریس

آئندہ دو سال تک ہم خیال جماعتوں کے ساتھ مہم چلائی جائے گی ۔ مودی حکومت کے تین سال کی تکمیل پر پارٹی نے ویڈیو بھی جاری کیا

نئی دہلی 16 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس نے آج اعلان کیا کہ وہ دوسری تمام ہم خیال جماعتوں کے ساتھ آئندہ 24 ماہ کے دوران ملک گیر مہم چلائے گی تاکہ بی جے پی زیر قیادت حکومت کا پردہ فاش کیا جاسکے ۔ ایک پریس کانفرنس میں یہ اعلان کرتے ہوئے کل ہند کانگریس کے انچارچ برائے مواصلات رندیپ سرجیوالا نے کہا کہ راہول گاندھی کی قیادت میں پارٹی کی جانب سے حکومت کی ناکامیوں کو عوام کے سامنے لایا جائیگا ۔ یہ کام ملک کے طول و عرض میں کیا جائیگا ۔ مودی حکومت کے تین سال کی تکمیل پر کانگریس کے نوجوان قائدین کی جانب سے مختلف محاذوں پر حکومت کی ناکامیوں کو اجاگر کیا گیا ہے ان میں پاکستان سے نمٹنے اور کشمیر کی پالیسی بھی شامل ہے ۔ اس کے علاوہ دلتوں پر ہونے والے مظالم ‘ خواتین کے تحفظ اور ڈیزل کی قیمتوں کا مسئلہ بھی شامل ہے اور کہا گیا ہے کہ حکومت روزگار پیدا کرنے میں بھی ناکام ہوگئی ہے ۔ پریس کانفرنس کے دوران ایک پاور پوائنٹ پریزینٹیشن بھی دیا گیا ۔ اس میں کالا دھن واپس لانے میں حکومت کی ناکامی ‘ جی ایس ٹی ‘ آدھار ‘ یو پی اے حکومت کی اسکیمات کا نام بدلنے ‘ ڈیہجیٹل اور اسکل انڈیا جیسے مسائل کو بھی اجاگر کرتے ہوئے یہ واضح کیا گیا ہے کہ حکومت نے زرعی قرضہ جات کے مسئلہ پر بھی کوئی بھی کارروائی نہیں کی ہے ۔ سرجیوالا نے اخباری نمائندوں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ بی جے پی کے جھوٹ کو آشکار کرنے کیلئے آئندہ 24 مہینوں کے دوران ایک مہم شروع کی جائیگی اور تمام ہم خیال اور حکومت سے اختلاف رکھنے والی جماعتوں کو ایک پلیٹ فارم پر لایا جائیگا ۔ کانگریس قائدین جیوتر آدتیہ سندھیا ‘ سچن پائلٹ ‘ آر پی این سنگھ ‘ سشمیتا دیو اور دیویا اسپندنا نے بھی ملک میں عدم رواداری کا مسئلہ اٹھایا اور کہا کہ حقیقی اور عوامی مسائل کو حل کرنے کی بجائے صرف زبانی جمع خرچ پر توجہ دی جا رہی ہے ۔ سندھیا نے کہا کہ حکومت جب اقتدار پر آئی تھی اس نے اچھے دن لانے کا خواب دکھایا تھا لیکن گذشتہ تین برسوں میں اس نے عوام کے خواب چکنا چور کردئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں عدم رواداری کا ماحول ہے ۔ اگر کوئی اس پر تبادلہ خیال کرتا ہے تو اسے قوم مخالف قرار دیا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اب حکومت ہی یہ فیصلہ کر رہی ہے کہ عوام کو کیا کھانا چاہئے ‘ کیا سیکھنا چاہئے ‘ کیا پہننا چاہئے ۔ وہ نظریاتی اعتبار کی پالیسیوں کو عوام پر مسلط کرنے کی کوشش کر رہی ہے ۔ سچن پائلٹ نے کہا کہ کانگریس کی جانب سے ملک کے عوام کو ایک بہتر حکمرانی کا ماڈل پیش کیا جائیگا اور بی جے پی کی ناکامیوں کو اجاگر کیا جائیگا ۔ اس نے انتخابات کے دوران عوام سے جو وعدے کئے تھے وہ اسے پورا کرنے میں ناکام ہوگئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم ایک متبادل طرز حکمرانی کا منصوبہ عوام کے سامنے پیش کرینگے اور عوام میں جھوٹ نہیں بولیں گے ۔ کانگریس نے ایک ویڈیو بھی تیار کیا ہے جسے تین سال برباد ۔ لیپا پوتی سرکار کا نام دیا گیا ہے ۔ کانگریس قائدین نے حکومت کے اعلی عہدیداروں کی جانب سے وجئے ملیا اور للت مودی جیسے افراد کے ملک سے فرار میں مدد فراہم کئے جانے کا بھی مسئلہ اٹھایا۔ واضح رہے کہ مرکز کی نریندر مودی حکومت کے تین سال مکمل ہو رہے ہیں اور حکومت نے اس پر عوام کی رائے حاصل کرنے کا بھی منصوبہ بنایا ہے ۔ کانگریس نے حکومت کے دعووں کے برخلاف حالات کے ابتر ہونے کا الزام عائد کیا ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT