Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ میں 18 ماہ کی تاخیر

حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ میں 18 ماہ کی تاخیر

دسمبر 2018 تک تکمیل متوقع ، ایم ڈی ایل اینڈ ٹی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ 4 ۔ مئی : ( پی ٹی آئی / سیاست نیوز ) : حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ کام کی تکمیل میں 18 ماہ کی تاخیر پیش آسکتی ہے ۔ ایل اینڈ ٹی میٹرو ریل پراجکٹ کے منیجنگ ڈائرکٹر و سی ای او وی بی گیڈگل نے میڈیا نمائندوں کو اس بات سے واقف کروایا ۔ انہوں نے کہا کہ پراجکٹ تکمیل کی تاخیر کی کئی وجوہات ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس پراجکٹ کی تکمیل شیڈول کے حساب سے جولائی 2017 تک ہوجانی چاہئے تھی تاہم اب یہ پراجکٹ دسمبر 2018 تک تکمیل پائے گا ۔ ڈپٹی ایم ڈی و صدر ایل اینڈ ٹی ایس این سبرامنیم نے کہا کہ تاخیر کی وجوہات پر ریاستی حکومت سے ایل اینڈ ٹی کی بات چیت جاری ہے ۔ اس کے ثمر آور نتائج برآمد ہونے کی انہوں نے امید جتائی ۔ ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ ایل اینڈ ٹی کمپنی نے تاحال ریل پراجکٹ پر 9 ہزار کروڑ بشمول 2 ہزار دو سو کروڑ خرچ کرچکی ہے ۔ حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ سولہ ہزار کروڑ روپئے پر مشتمل پراجکٹ ہے ۔ ایم ڈی ایل اینڈ ٹی حیدرآباد میٹرو ریل پراجکٹ نے امید جتائی کہ 2 جون فاونڈیشن ڈے تلنگانہ کے موقع پر میٹرو ریل کے تین کوریڈورس کے چند سیکشن کا آغاز ہوسکتا ہے ۔ اس دوران بتایا گیا کہ 31 مئی سے بحیثیت ایم ڈی ایل اینڈ ٹی میٹرو ریل حیدرآباد لمٹیڈ شیو آنند نمبرگی عہدہ کا جائزہ حاصل کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT