Saturday , September 23 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد میں تین سوپر اسپشیالیٹی ہاسپٹلس کی تعمیرکا منصوبہ

حیدرآباد میں تین سوپر اسپشیالیٹی ہاسپٹلس کی تعمیرکا منصوبہ

نیدر لینڈر کی ماہرین کی ٹیم سے چیف منسٹر کے سی آر کی بات چیت ، عمارتوں کی جلد تعمیر پر زور
حیدرآباد /22 اپریل ( سیاست نیوز ) ریاست تلنگانہ کے صدر مقام حیدرآباد کے اطراف و اکناف کے علاوہ اضلاع کریم نگر اور کھمم میں حکومت کی جانب سے قائم کئے جانے والے بڑے ہاسپٹلس کی عمارتوں ( سوپر اسیشیالٹی ہاسپٹلس ) کی تعمیر کیلئے نیدر لینڈ سے تعلق رکھنے والے رویو بینک نے حکومت تلنگانہ سے مالی تعاون کرنے کیلئے پہل کیا ہے ۔ اس سلسلہ میں آج رویو بینک کے نمائندوں نے آج چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ سے ملاقات کی اور ان نمائندوں کے ساتھ ہی چیف منسٹر نے ایک جائزہ اجلاس طلب کیا جس میں ان نئے دواخانوں کے قیام اور عمارتوں کی تعمیر پر تفصیلی غور و خوص کیا گیا ۔ چیف منسرٹ نے واضح طور پر کہا کہ شہر حیدرآباد میں عثمانیہ و گاندھی ہاسپٹلس کی طرفز پر ہی پہلے مرحلہ میں تین بڑے ہاسپٹلس ( سوپر اسپیشالیٹی ہاسپٹلس ) تعمیرکئے جانے چاہئے اور ہر ایک ہاسپٹل میں کم سے کم 750 بستروں کا انتظام کرنے کا بھی مشورہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ 250 بستر خواترین و چھوٹے بچوں کو مختص کئے جانے چاہئے ۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر نے کہا کہ عثمانیہ ہاسپٹل ٹاورس بھی ایک ہزار بستروں کی گنجائش رکھتے ہوئے تعمیر کئے جائیں گے ۔ علاوہ ازیں کریم نگر اور کھمم میں بھی تعمیر کیا جانے والا ہاسپٹل کم از کم 500 بستروں کی گنجائش پر مشتمل رہے گا ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ ان نئے ہاسپٹلس کے قیام و تعمیر کے ذریعہ جملہ 4250 بستروں کی گنجائش میں اضافہ ہوگا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ رویو بینک کو سری لنکا اور دیگر علاقوں میں بڑے بڑے ہاسپٹلس تعمیر کرنے کا وسیع تر تجربہ حاصل ہے ۔

TOPPOPULARRECENT