Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / حیدرآباد کو عالمی شہر بنانے اور لا اینڈ آرڈر پر خصوصی توجہ

حیدرآباد کو عالمی شہر بنانے اور لا اینڈ آرڈر پر خصوصی توجہ

 

٭  آٹو رکشا ڈرائیورس کیلئے 5 لاکھ روپئے مالیتی بیمہ اسکیم
٭   آئندہ ماہ نظام کالج گراؤنڈ پر ’’سمہا گرجنا ‘‘جلسہ عام
٭  گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات کی تیاریاں

حیدرآباد۔ 20 ڈسمبر (سیاست نیوز) وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی و پنچایت راج کے ٹی راما راؤ نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت ریاست کے غریب عوام کی بہبود اور ریاست کو ’’سنہرا تلنگانہ‘‘ بنانے کا عہد کرچکی ہے۔ انہوں نے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن انتخابات کے پیش نظر اس بات کا ادعا کیا کہ حیدرآباد میں امن و ضبط کی برقراری کو یقینی بنایا جائے گا اور شہر بھر میں سکیورٹی انتظامات کیلئے 10,000 سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے جارہے ہیں۔ ریاست کے آٹو رکشا ورکرس کے مسائل کو حل کرنے کو بھی ٹی آر ایس حکومت اولین ترجیح دے رہی ہے۔  ایل بی نگر میں رکشا ورکرس کے عزت ِنفس پروگرام (سیلف ریسپیکٹ) سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جی ایچ ایم سی کے آنے والے انتخابات میں مہم چلانے کیلئے یہ ورکرس اہم رول ادا کریں گے۔ ہر ایک آٹو رکشا ورکر کو چاہئے کہ وہ جی ایچ ایم سی حدود میں چلائے جانے والے آٹو پر ٹی آر ایس کے گلابی پرچم لہراتے ہوئے مہم چلائیں۔ حیدرآباد میں غیرسماجی عناصر پر نظر رکھنے کیلئے پولیس کو چوکس کیا جارہا ہے۔ حیدرآباد کو ایک عالمی شہر میں تبدیل کرنے کے منصوبہ کے حصہ کے طور پر پولیس کو عصری ٹیکنالوجی سے آراستہ کیا جائے گا۔ انہوں نے سابق حکومتوں پر الزام عائد کیا کہ حیدرآباد کی ترقی پر ان حکومتوں پر کوئی توجہ نہیں دی۔ اب ٹی آر ایس حکومت یہ عہد کرتی ہے کہ حیدرآباد کو عالمی شہر میں تبدیل کیا جائے گا۔ اس کا یہ مشن ہے کہ حیدرآباد میں انفراسٹرکچر کو بہتر بنایا جائے۔حکومت تلنگانہ نے جی ایچ ایم سی کے آٹو رکشا ڈرائیوروں کیلئے 5 لاکھ مالیتی اتفاقی حادثاتی بیمہ اسکیم کو متعارف کرکے اس کیلئے تمام سہولتیں فراہم کررہی ہے۔ علاوہ ازیں حکومت نے آٹو رکشاؤں کے ذریعہ سالانہ حکومت کو حاصل ہونے والے 77 کروڑ روپئے موٹر وہیکل ٹیکس کو معاف کرچکی ہے۔ آج یہاں شہر حیدرآباد کے مضافاتی علاقہ ایل بی نگر میں آٹو ورکرس کیلئے ’’عزت نفس‘‘ کے موضوع پر منعقدہ جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کے ٹی آر نے اس بات کا انکشاف کیا اور کہا کہ حکومت آٹو رکشا ڈرائیورس اور ورکرس کیلئے مزید متعدد فلاحی و بہبودی پروگرامس کو شروع کرنے کیلئے تیار ہے۔ انہوں نے حکومت ، جی ایچ ایم سی کے مجوزہ انتخابات کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے ہر طبقہ کی فلاح و بہبود کیلئے موثر اقدامات کررہی ہے۔ کے ٹی آر نے کہا کہ حکومت تلنگانہ نے جی ایچ ایم سی اور ٹی ایس آر ٹی سی کے ورکرس و ملازمین کی تنخواہوں میں زبردست اضافہ کرنے کے اقدامات کئے ہیں۔ اس موقع پر کے ٹی آر نے نئے سال کے آغاز پر آئندہ ماہ جنوری کے دوسرے ہفتہ میں نظام کالج گراؤنڈ پر ’’نرسمہا گرجنا‘‘ جلسہ عام منعقد کرنے کا اعلان کیا اور بتایا کہ اس جلسہ میں گریٹر حیدرآباد کے حدود میں واقع تمام اسمبلی حلقوں و بلدی ڈیویژنوں کے عوام کی کثیر تعداد میں شرکت کو یقینی بنایا جائے گا۔ اس موقع پر مختلف قائدین نے بھی مخاطب کیا۔ قبل ازیں وزیر آئی ٹی اور پنچایت راج نے ویملواڑہ میں ترقیاتی کاموں کے افتتاحی پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آندھرائی قائدین کی زیرقیادت 50 سال کی حکومت میں ترقی نہیں ہوئی لیکن ہم صرف 5 سال میں تلنگانہ کو چمکادیں گے ۔  ویملواڑہ حلقہ اسمبلی علاقہ کے چند ترقیاتی پروگراموں میں انہوں نے شرکت کی ۔ اس کے علاوہ مین سڑک کمان سے آر ٹی سی بس اسٹانڈ کے بریج تک 48 کروڑ روپیوں سے 4 لائین سڑک کے کاموں کا افتتاح کیا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT