Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / حیدرآباد کے 6 لاکھ خاندانوں کے برقی و آبرسانی بقایاجات معاف

حیدرآباد کے 6 لاکھ خاندانوں کے برقی و آبرسانی بقایاجات معاف

حیدرآباد۔/3ڈسمبر، ( سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے انتخابات کے پیش نظر 6 لاکھ غریب خاندانوں کیلئے برقی اور آبرسانی کے بقایا جات کی معافی کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سلسلہ میں آج شہر سے تعلق رکھنے والے وزراء اور مختلف محکمہ جات کے عہدیداروں کے ساتھ اجلاس منعقد کرتے ہوئے یہ فیصلہ کیا گیا۔ چیف منسٹر کے دفتر کے مطابق 6لاکھ غریب خاندانوں کے برقی بقایا جات 128کروڑ ہیں جبکہ آبرسانی کے بقایا جات 290 کروڑ ہیں۔ اس طرح مجموعی طور پر 418کروڑ روپئے کے بقایا جات معاف کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزراء پی سرینواس یادو، پدما راؤ کے علاوہ برقی، آبرسانی اور گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے عہدیدار اجلاس میں شریک تھے۔ بتایا جاتا ہے کہ مجالس مقامی کی 12 کونسل نشستوں کے انتخابات کے پیش نظر انتخابی ضابطہ اخلاق کے نفاذ کے سبب سرکاری طور پر اس کا اعلان نہیں کیا جائے گا تاہم کونسل کے انتخابات کی تکمیل اور انتخابی ضابطہ اخلاق کی برخواستگی کے بعد اس سلسلہ میں باقاعدہ احکامات جاری کئے جائیں گے۔ ذرائع نے بتایا کہ چیف منسٹر نے عہدیداروں سے شہر میں برقی اور آبرسانی کے بقایا جات کے بارے میں تفصیلات حاصل کیں۔ خاص طور پر غریب خاندانوں کے بقایا جات کے بارے میں اعداد و شمار حاصل کئے گئے اور حکومت نے418کروڑ روپئے کی معافی کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ فیصلہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے مجوزہ انتخابات کے پیش نظر کیا گیا ہے تاکہ غریب رائے دہندوں کی تائید حاصل کی جاسکے۔ چیف منسٹر کے اس فیصلہ کا اگرچہ سرکاری طور پر اعلان نہیں کیا گیا تاہم گریٹر حیدرآباد کے پارٹی کیڈر کو اس کی اطلاع دے دی گئی جس کے بعد ٹی آر ایس ہیڈکوارٹر تلنگانہ بھون میں پارٹی قائدین اور کارکنوں نے جشن منایا۔ پارٹی کے گریٹر حیدرآباد صدر ایم ہنمنت راؤ کی قیادت میں چیف منسٹر کی تصویر کو دودھ سے نہلایا گیا اور زبردست آتشبازی کی گئی۔ پارٹی کارکنوں نے جشن منایا اور مٹھائیاں تقسیم کی گئیں۔ ٹی آر ایس بھون کے علاوہ شہر کے بیشتر بلدی ڈیویژنس میں مقامی ٹی آر ایس قائدین اور کارکنوں نے حکومت کے اس فیصلہ کا خیرمقدم کرتے ہوئے جشن منایا اور آتشبازی کی۔ گریٹر حیدرآباد ٹی آر ایس کے صدر ہنمنت راؤ نے حکومت کے اس فیصلہ کا خیرمقدم کیا اور کہا کہ چندر شیکھر راؤ حکومت ہمیشہ ہی غریبوں کی فلاح و بہبود کی پابند رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر نے غریبوں کی مشکلات کو پیش نظر رکھتے ہوئے یہ فیصلہ کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جس طرح ڈبل بیڈروم مکانات کی فراہمی کی اسکیم پر عمل آوری کا آغاز کیا گیا اسی طرح برقی اور آبرسانی کے بقایا جات کی معافی سے عوام کو بڑی راحت ملے گی۔ ہنمنت راؤ کے مطابق کے سی آر وہ واحد چیف منسٹر ہیں جنہوں نے غریبوں کی تکالیف کو محسوس کرتے ہوئے سرکاری خزانہ پر اس قدر بوجھ برداشت کیا اور بقایا جات کی معافی کا فیصلہ کیا ہے۔ ہنمنت راؤ نے اس یقین کا اظہار کیا کہ بلدی انتخابات میں عوام ٹی آر ایس کی تائید کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT