Monday , October 23 2017
Home / شہر کی خبریں / خانگی اسکولس کے خلاف حکومت کے رویہ پر احتجاج کا اعلان

خانگی اسکولس کے خلاف حکومت کے رویہ پر احتجاج کا اعلان

12 اکتوبر کو سیاہ پٹیوں کے ساتھ خدمات ، نیشنل انڈیپنڈنٹ اسکولس اسوسی ایشن کا شدید ردعمل
حیدرآباد۔8اکٹوبر(سیاست نیوز) خانگی اسکولوں کی جانب سے حکومت کے رویہ کے خلاف ملک گیر سطح پر 12اکٹوبر کو سیاہ پٹیاں باندھ کر احتجاج کیا جائے گا اور اس دن اساتذہ اور اسکول انتظامیہ کی جانب سے سیاہ بیاچس لگاتے ہوئے خدمات انجام دی جائیں گی۔ نیشنل انڈیپینڈینٹ اسکول الائنس کی جانب سے قومی سطح پر کئے جانے والی اس احتجاج کو ریاست تلنگانہ میں خانگی اسکولوں کی تنظیموں کی تائید حاصل ہورہی ہے اور تلنگانہ راشٹر اسکول مینجمنٹ اسوسیشن نے اس احتجاج کی تائید کرتے ہوئے اس میں شمولیت کا اعلان کیا ہے ۔ خانگی اسکول انتظامیہ کا حکومت پرالزام ہے کہ محکمہ تعلیم کی جانب سے خانگی اسکولوں کے معمولات میں بلا وجہ مداخلت کی جا رہی ہے اور انتظامیہ کو ہراساں کیا جانے لگا ہے ۔حکومت کی جانب سے خانگی اسکولوں کے نصاب کے علاوہ فیس کے معاملات اور دیگر امور کے سلسلہ میں کی جانے والی ہراسانی کے متعلق خانگی اسکول انتظامیہ کا کہناہے کہ محکمہ تعلیم کی جانب سے اوسط درجہ کے اسکولو ںکو نشانہ بنایا جا رہا ہے اور انہیں ہراساں کیا جا رہا ہے جبکہ یہ اسکول ریاست کی شرح خواندگی کو بہتر بنانے میں کلیدی کردار ادا کرتے ہیں ۔12اکٹوبر کو خانگی اسکولوں کے احتجاج کے سلسلہ میں تنظیم کے ذمہ داروں نے بتایا کہ اس دن کسی اسکول و تعلیمی ادارہ کو تعطیل نہیں رہے گی بلکہ انتظامیہ اور اساتذہ کے مفادات کے تحفظ کیلئے خانگی اسکول انتظامیہ احتجاجی مظاہرہ کریں گے اور اس احتجاج کے دوران اسکول میں سیاہ پٹیاں پہن کرخدمات انجام دی جائیں گی تاکہ حکومت کو اس بات سے واقف کروایا جاسکے کہ خانگی اسکول انتظامیہ حکومت اور محکمہ تعلیم کی جانب سے کئے جانے والے اقدمات سے خوش نہیں ہیں اور ان کے اس رویہ کے خلاف اسکول انتظامیہ اور اساتذہ احتجاج پر مجبور ہو چکے ہیں۔نیشنل انڈیپینڈینٹ اسکولس اسوسیشن کے قومی قائدین نے بتایا کہ خانگی اسکولوں کو جنہیں حکومت کی جانب سے کوئی امداد حاصل نہیں ہے ان اسکولوں میں خدمات انجام دینے والے اساتذہ کو کوئی تحفظ حاصل نہیں ہے لیکن اس کے باوجود حکومت کی جانب سے سخت ترین قوانین و فیصلوں کے ذریعہ متوسط اسکولوں کو بند کرنے کیلئے کوشاں ہے جبکہ کارپوریٹ ادارو ںکی جانب سے شعبہ تعلیم میں کی جانے والی من مانی پر حکومت اور محکمہ تعلیم کی جانب سے خاموشی اختیار کی جا رہی ہے ۔بتایاجاتا ہے کہ 12اکٹوبر کو ہونے والے اس احتجاج کے بعد خانگی اسکول انتظامیہ کی جانب مزید سخت اور طویل مدتی احتجاج کے آغاز کا اعلان کیا جائے گا تاکہ اسکولو ں اور انتظامیہ کو سرکاری و محکمہ جاتی ہراسانی سے بچایا جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT