Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / خانگی شعبہ میں تحفظات پر آج وی ہنمنت راؤ کا احتجاجی دھرنا

خانگی شعبہ میں تحفظات پر آج وی ہنمنت راؤ کا احتجاجی دھرنا

کارپوریٹ سیکٹر اور ملٹی نیشنل کمپنیوں میں تحفظات ضروری ، رکن راجیہ سبھا کانگریس کا بیان
حیدرآباد ۔ 15 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز) : خانگی شعبہ میں تحفظات فراہم کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے سکریٹری اے آئی سی سی و رکن راجیہ سبھا مسٹر وی ہنمنت راؤ 16 اپریل کو دھرنا چوک پر ایک روزہ احتجاجی دھرنا منظم کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ دھرنے کو کامیاب بنانے کی مسٹر محمد خواجہ فخر الدین نے عوام سے اپیل کی ہے ۔ بہار کے خانگی شعبہ میں تحفظات پر مکمل عمل آوری کرنے چیف منسٹر بہار نتیش کمار کی جانب سے اعلان کرنے کے بعد ملک بھر میں اس کی مانگ میں اضافہ ہوگیا ہے ۔ جنرل سکریٹری آل انڈیا کانگریس کمیٹی و انچارج تلنگانہ کانگریس امور مسٹر ڈگ وجئے سنگھ نے اس موضوع پر مباحث کے لیے زور دیا ہے ۔ کانگریس کے سینئیر قائد مسٹر وی ہنمنت راؤ خانگی شعبہ میں تحفظات پر عمل آوری کے لیے ریاستی و مرکزی حکومت پر دباؤ ڈالنے کے لیے 16 اپریل کو دھرنا چوک اندرا پارک کے قریب صبح 10 تا شام 5 بجے تک دھرنا منظم کریں گے ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ مسٹر محمد خواجہ فخر الدین نے ہنمنت راؤ کو سیکولر و غریبوں کا قائد قرار دیتے ہوئے کہا کہ تپتی دھوپ کے باوجود ہنمنت راؤ پسماندہ طبقات اور مسلمانوں کو بھی خانگی شعبہ میں تحفظات کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے احتجاجی پروگرام کا اہتمام کررہے ہیں ۔ تحفظات سے سرکاری ملازمتوں میں پسماندہ طبقات ایس سی ، ایس ٹی ، بی سی طبقات اور مسلمانوں کو فائدہ مل رہا ہے ۔ تاہم خانگی شعبہ کے تقررات میں پسماندہ طبقات اور مسلمانوں کو نظر انداز کردیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کارپوریٹ سیکٹر اور ملٹی نیشنل کمپنیوں کے قیام کے لیے حکومت کی جانب سے برقی پانی وغیرہ پر مکمل سبسیڈی دی جارہی ہے ۔ رجسٹریشن و دوسری چیزوں میں رعایت دی جارہی ہے ۔ خانگی شعبہ کی ترقی میں حکومت کی جانب سے مکمل تعاون کیا جارہا ہے ۔ تمام سہولتیں میسر کی جارہی ہیں جس سے کارپوریٹ سیکٹرس اور ملٹی نیشنل کمپنیوں کو زبردست فائدہ ہورہا ہے مگر پسماندہ طبقات اور مسلمان تحفظات سے محروم ہورہے ہیں ۔ لہذا خانگی شعبہ میں تحفظات کے لیے مسٹر وی ہنمنت راؤ کی جانب سے کئے جانے والے احتجاج کو کامیاب بنانے کی وہ عوام سے بالخصوص مسلمانوں سے اپیل کرتے ہیں ۔ مسٹر محمد خواجہ فخر الدین نے کہا کہ کانگریس کی جانب سے فراہم کئے گئے 4 فیصد مسلم تحفظات سے تعلیم اور ملازمتوں میں مسلمانوں کو فائدہ ہورہا ہے ۔ خانگی شعبہ میں تحفظات کی فراہمی سے خانگی شعبہ کے تقررات میں مسلمانوں کو بھی 4 فیصد مسلم تحفظات فراہم ہوں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT