Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / خانہ کعبہ کے دیدار سے دعاؤں کی قبولیت کا شرف

خانہ کعبہ کے دیدار سے دعاؤں کی قبولیت کا شرف

عازمین کو دوران حج عبادتوں میں مشغول رہنے کا مشورہ ، محمد علی شبیر ، جانا ریڈی کا عازمین سے خطاب
حیدرآباد ۔ 16 ۔ اگست (سیاست نیوز) تلنگانہ کانگریس کمیٹی کے قائدین نے آج عازمین حج کے پانچویں قافلہ کو حج ہاؤز نامپلی سے وداع کیا۔ تلنگانہ قانون ساز کونسل نے قائد اپوزیشن محمد علی شبیر ، اسمبلی میں قائد اپوزیشن جانا ریڈی اور صدر پردیش کانگریس اتم کمار ریڈی نے عازمین حج کو وداع کرتے ہوئے ملک میں سیکولرازم کی بقاء اور امن و امان کیلئے دعا کی اپیل کی۔ تلنگانہ حج کمیٹی کے ذریعہ ابھی تک عازمین حج کے پانچ قافلے سعودی ایرلائینس کی خصوصی پروازوں کے ذریعہ سوئے حرم روانہ ہوچکے ہیں۔ پانچ قافلوں میں 2250 عازمین سعودی عرب پہنچ چکے ہیں اور وہ عبادتوں میں مصروف ہیں۔ قائد اپوزیشن محمد علی شبیر نے عازمین حج سے خطاب کرتے ہوئے مشورہ دیا کہ وہ سعودی عرب میں قیام کے 40 دن اپنا وقت عبادتوں میں صرف کریں اور دیگر دنیاوی امور سے خود کو بچائیں۔ انہوں نے عازمین حج کو سیل فون کے استعمال میں احتیاط کا مشورہ دیا اور کہا کہ سیل فون عبادتوں میں خلل کا باعث ہوتا ہے اور اس کے باعث خشوع و خضوع ختم ہوجاتا ہے ، لہذا صرف ضرورت کے حد تک ہی اس کا استعمال ہونا چاہئے ۔ محمد علی شبیر نے کہا کہ عبادتوں میں رکاوٹوں کیلئے شیطان جس طرح گمراہ کرتا ہے ، کچھ یہی حال موبائیل فون کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ خانہ کعبہ پر پہلی نظر کے بعد عازمین جو بھی دعا کرے، وہ شرف قبولیت حاصل کرتی ہے۔ بعض دعائیں فوری قبول ہوجاتی ہے جبکہ بعض دعاؤں کا اثر زندگی میں کسی مصیبت کے وقت دکھائی دیتا ہے اور بعض دعائیں یوم محشر کام آتی ہے۔ عازمین جب دعاؤں میں مصروف ہوتے ہیں تو اچانک فون کی گھنٹی بجتی ہے جس سے خشوع و خضوع اور خدا سے رابطہ ٹوٹ جاتا ہے ۔ انہوں نے عازمین کو مشورہ دیا کہ وہ عبادتوں اور دعاؤں کے وقت کم از کم اپنا فون بند رکھیں اور مکمل خشوع و خضوع کے ساتھ عالم اسلام ، ہندوستان اور بالخصوص تلنگانہ میں ترقی و خوشحالی کیلئے دعا کریں۔ محمد علی شبیر نے عازمین سے کہا کہ وہ سعودی عرب میں قیام کے دوران کم کھانے اور پینے کی عادت ڈالیں کیونکہ زیادہ غذا کے استعمال سے بار بار طہارت کی ضرورت پیش آتی ہے جو عبادتوں میں رکاوٹ کی طرح ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایام حج کے دوران خاص طور پر کم کھانے کی عادت ڈالنی چاہئے کیونکہ وضو خانے اور بیت الخلاء کیلئے طویل قطار ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس دور حکومت میں جب وہ وزیر تھے، رزاق منزل کی جائیداد کو حاصل کرتے ہوئے وقف بورڈ کے حوالے کیا گیا ۔ 2005 ء میں لینڈ ایکویزیشن کے ذریعہ اراضی حاصل کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ حج ہاؤز سے متصل کھلی اراضی کانگریس دور حکومت میں 22 کروڑ روپئے میں خریدی گئی ۔ انہوں نے وزیر کی حیثیت سے اسٹامپ ڈیوٹی معاف کرایا اور رجسٹریشن کیا گیا۔ محمد علی شبیر نے عازمین سے اپیل کی کہ وہ صدر کانگریس سونیا گاندھی کی صحت کیلئے خاص دعا کریں جو ملک میں سیکولرازم کے لئے جدوجہد کر رہی ہیں۔ صدر پردیش کانگریس اتم کمار ریڈی نے کہاکہ ملک میں موجودہ حکومت کے اقدامات مخالف اقلیت ہے اور اقلیتوں کو ہراساں کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مسلمان گزشتہ 70 برسوں سے پسماندگی کا شکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس سیکولرازم کی بقاء اور تحفظ کیلئے سرگرم ہیں ۔ اتم کمار ریڈی نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے مسلمانوں کو تعلیم اور روزگار میں 4 فیصد تحفظات فراہم کئے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ ٹی آر ایس حکومت اپنے وعدہ کی تکمیل کرتے ہوئے 12 فیصد تحفظات فراہم کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ اسلام میں حج ایک اہم رکن ہے اور اس مقدس فریضہ کی ادائیگی کے دوران عازمین حج کو ملک میں سیکولرازم اور امن و امان کیلئے دعا کرنی چاہئے ۔ اس موقع پر قائد اپوزیشن تلنگانہ اسمبلی کے جانا ریڈی نے عازمین حج سے ملاقات کرتے ہوئے دعاؤں کی خواہش کی۔ اسپیشل آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے خیرمقدم کیا اور عازمین حج کو صبر و تحمل سے کام لینے کا مشورہ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس دور حکومت میں جس وقت محمد علی شبیر وزیر اقلیتی بہبود تھے ، عازمین حج کیلئے بہتر انتظامات کئے گئے تھے ۔ اس موقع پر سابق رکن پارلیمنٹ انجن کمار یادو ، صدر اقلیتی سیل فخرالدین، صدر یوتھ کانگریس انیل کمار یادو کے علاوہ اقلیتی قائدین ایس کے افضل الدین ، مقصود حسین ، واجد حسین سابق کارپوریٹر، شیخ عبداللہ سہیل محمد غوث سابق کارپوریٹر ، جاوید احمد اور دوسرے موجود تھے۔ مولانا عبدالمغنی مظاہری صدر سٹی جمیعت العلماء نے عازمین سے خطاب کرتے ہوئے حج و عمرہ کے فضائل اور مناسک بیان کئے۔ انہوں نے آخر میں دعا کی۔

TOPPOPULARRECENT