Wednesday , October 18 2017
Home / Top Stories / خستہ حال سڑکوں کے ساتھ حیدرآباد کو عالمی شہر نہیں بنایا جاسکتا :کے ٹی آر

خستہ حال سڑکوں کے ساتھ حیدرآباد کو عالمی شہر نہیں بنایا جاسکتا :کے ٹی آر

حیدرآباد۔20جون ( این ایس ایس ) وزیر بلدی نظم و نسق و شہری ترقیات کے تارک راما راؤ نے شہر کی سڑـوں کی خستہ حالی پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے آج کہا کہ سڑکوں کی دیکھ بھال کا کام خانگی اداروں کے سپرد کیا جانا چاہیئے ۔ کے ٹی آر جو ڈاکٹر مری چنا ریڈی مرکز برائے فروغ انسانی وسائل میں 9بجے شب منعقدہ تقریب میں سڑکوں کی بدحالی کے سبب 20منٹ تاخیر سے پہنچے تھے ۔ انجنیئرنگ کے کاموں کے معیار کو بہتر بنانے کے موضوع پر منعقدہ ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے شہرکی خستہ حال سڑکوں پر شدید برہمی کا اظہار کیا ۔ انہوں نے متعلقہ عہدیداروں پر زور دیا کہ سڑکوں کو بہتر صاف و شفاف بنایا جائے اور سڑکوں کے کنارے سنہرہ
زاری کیلئے عوام میں شامل کیا جائے ۔ کے ٹی آر نے متعلقہ عہدیداروں کو اپنی شدید برہمی کا نشانہ بناتے ہوئے سوال کیا کہ بنیادی سہولتوں اور انفراسٹرکچر کے فقدان کے ساتھ ایسی خستہ حال سڑکوں کے ساتھ آیا حیدرآباد کو عالمی شہر بنایا جاسکتا ہے ؟ ۔ انہوں نے صاف طور پر کہا کہ ہم کس طرح حیدرآباد کے ایک عالمی شہر ہونے کا دعویٰ کرسکتے ہیں جب ہم ایک ایمبولنس کے گذرنے کیلئے بھی ایک بہتر سڑک فراہم نہیں کرسکتے ؟ ۔ کے ٹی آر نے بلدی عہدیداروں پر شدید برہمی کے ساتھ برستے ہوئے کہا کہ ’’ کروڑوں روپئے کے مصارف سے سڑکیں تعمیر کی جاتی ہیں لیکن معمولی بارش میں یہ سڑکیں بہہ جاتی ہیں ۔ چنانچہ سڑکوں کی موثر دیکھ بھال ‘مرمت و درستگی کا کام خانگی اداروں کے حوالہ کردیا جانا چاہیئے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت سڑکوں کی دیکھ بھال کا کام خانگی اداروں کے حوالہ کرنے کا منصوبہ بنائی ہے اور تین تا پانچ سرکل واری اساس پر مصارف برداشت کئے جائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT