Monday , August 21 2017
Home / Top Stories / خواتین خود کو بااختیار بنائیں

خواتین خود کو بااختیار بنائیں

وزیراعظم مودی کا خطاب‘ تحفظات بل پر خاموشی
نئی دہلی ۔16مارچ ( سیاست ڈاٹ کام ) خواتین کو چاہیئے کہ وہ عوامی نمائندہ کی حیثیت سے ٹکنالوجی کی سطح پر خود کو با اختیار بنائیں کیونکہ صرف نظام میں تبدیلی لانا کافی نہیں ہوگا ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے آج یہ بات کہی لیکن خواتین تحفظات بل کے بارے میں خاموشی اختیار کی ‘حالانکہ صدر جمہوریہ اور نائب صدر نے کل اس بل کی بھرپور تائید کی تھی ۔ وزیراعظم نے کہا کہ صرف نظام میں تبدیلی کافی نہیں ہوگی ۔ مقررہ طریقہ کار میں چند تبدیلیاں تو ہوتی رہتی ہیں لیکن خواتین کو چاہیئے کہ وہ ٹکنالوجی کی سطح پر خود کو با اختیار بنائیں اور اثر قائم کریں ۔ خاتون ارکان مقننہ کی قدمی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کاہ کہ بحیثیت عوامی نمائندہ خواتین اپنی عوامی امیج کو فروغ دینے کی کوشش کریں ۔ ایک مرتبہ ایسا ہوجائے تو پھر لوگ آپ کے نظریات کو قبول کرنے آمادہ ہوں گے اور آپ کی شخصیت اثر قائم کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں خواتین کی ترقی سے آگے سوچنا چاہیئے اور خواتین کی زیرقیادت ترقی کی سمت آگے بڑھنا چاہیئے ۔ صدر جمہوریہ پرنب مکرجی نے کل اس کانفرنس کا افتتاح کرتے ہوئے منتخبہ اداروں میں خواتین کو 33 فیصد تحفظات کی تائید کی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ یہ انتہائی افسوسناک حقیقت ہیکہ ملک میں اب تک خاتون ارکان کی تعداد پارلیمنٹ کی مجموعی تعداد کے 12فیصد سے متجاوز نہیں ہوئی ۔ نائب صدر جمہوریہ حامد انصاری نے بھی سیاسی جماعتوں سے خواہش کی تھی کہ وہ قانون کی منظوری تک رضاکارانہ طور پر انتخابات میں خواتین کو زیادہ سے زیادہ نمائندگی دیں لیکن وزیراعظم نریندر مودی نے آج تقریر میں خواتین تحفظات بل کا کوئی ذکر نہیں کیا اور دیگر اُمور پر توجہ مرکوز کی ۔

TOPPOPULARRECENT