Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / خواتین کو دوسرے درجہ کا شہری نہیں بنایا جاسکتا : راجناتھ

خواتین کو دوسرے درجہ کا شہری نہیں بنایا جاسکتا : راجناتھ

نئی دہلی ۔ 23 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے آج طلاق ثلاثہ کو ’’سلگتا ہوا مسئلہ‘‘ قرار دیا اور کہا کہ ہندوستان جیسے ترقی پذیر ملک میں خواتین کے خلاف دوسرے درجہ کے شہری جیسا سلوک ناممکن ہے۔ انہوں نے یکساں سیول کوڈ کے حساس مسئلہ پر مباحث کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ اتفاق رائے کی صورت میں کسی کو بھی کوئی مسئلہ نہیں ہوگا چاہے ہر شہری کو بااختیار بنانے کیلئے کوششوں پر عمل آوری کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ باباصاحب بھیم راؤ امبیڈکر نے دستور میں ہر ایک کی بااختیاری کا تیقن دیا تھا، چاہے وہ کوئی عورت ہو یا کوئی اور۔ آپ اس حقیقت سے متفق ہوں گے کہ ہندوستان  جیسے ترقی پذیر ملک میں ہم عورتوں کو پسماندہ  نہیں رکھ سکتے۔ ان سے دوسرے درجہ کے شہری جیسا سلوک نہیں کرسکتے۔ کسی ترقی پسند سماج میں ایسا نامناسب ہے۔

TOPPOPULARRECENT