Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / خواتین کی صحت سماجی ترقی سے مربوط: ڈاکٹر سیدہ ثناء صدیقہ

خواتین کی صحت سماجی ترقی سے مربوط: ڈاکٹر سیدہ ثناء صدیقہ

سیاست دکن ریڈیو کی شعور بیداری مہم کا ویویک وردھنی کالج میں انعقاد

حیدرآباد ۔ 22 اکٹوبر (سیاست نیوز) صحت انسان کی وہ پوشیدہ طاقت ہے جس کے بناء کوئی بھی انسان اپنے روزمرہ کے معمولات کو بروئے کار نہیں لا سکتا ہے۔ انسان کی صحت اس کے حرکیاتی و تخلیقی صلاحیتوں کو فروغ دینے میں معاون ثابت ہوتی ہے۔ ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر سیدہ ثناء صدیقہ نیوٹریشنٹ نے ویویک وردھنی کالج فار یو جی اینڈ پی جی جام باغ کی طالبات سے کالج ہذا کے سمینار ہال میں کیا۔ بقول ان کے نسل نو فی الحال بہت ہی نازک دور سے گزر رہی ہے جن کا خمیازہ انہیں مستقبل میں بھگتنا پڑے گا۔ حالیہ دور میں خواتین بھی ترقی کے میدان میں مردوں کے شانہ بہ شانہ نظر آرہی ہیں اور غذا کے معاملے میں بے دلی کی بناء پر کئی طرح کی بیماریوں جیسے شوگر، تھائیرائیڈ، بی پی، موٹاپا، کمزوری وغیرہ میں مبتلاء ہوتی جارہی ہیں۔ انہوں نے سمینار ہال میں موجود لڑکیوں کو خاص تاکید کرتے ہوئے بتایا کہ لڑکیوں کا صحت کے تعلق سے فکرمند ہونا ان کیلئے اور مستقبل میں مفید ثابت ہوگا اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ لڑکیاں آج کل بڑی بڑی ڈگریاں تو حاصل کرلے رہے ہیں لیکن صحت کے تعلق سے فکرمند نظر نہیں آرہی ہیں۔ واضح رہیکہ یہ دکن ریڈیو 107.8 کے ’’صحت میرا گہنہ‘‘ پروگرام کا شعور بیداری مہم کا حصہ ہے جسے نیشنل کونسل آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کمیونکیشن ڈپارٹمنٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی گورنمنٹ آف انڈیا کی جانب سے عمل میں لایا جارہا ہے جو خاص کر خواتین کی صحت کے تعلق سے شعور بیدار کیا جارہا ہے۔ اس بات کا اظہار محمد منیر پروگرم کوآرڈینیٹر نے کیا۔ انہوں نے دکن ریڈیو کے پروگرام کے تعلق سے واقف کروایا اور اس طرح کے پروگرامس میں خواتین و لڑکیوں کی شمولیت پر زور دیا۔ اس موقع پر ڈاکٹر شالینی پنکتی صدر شعبہ کیمسٹری و انچارج ویمن ایمپاورمنٹ نے دکن ریڈیو کے پروگرام ’’صحت میرا گہنہ‘‘ کی تعریف کرتے ہوئے اس کا خلاصہ یوں کیا کہ خواتین گہنوں کو لیکر ہمیشہ فکرمند نظر آتی ہیں لیکن حقیقت میں خواتین کا اصل گہنہ صحت ہے۔ ضرورت ہے اس بات کی کہ خواتین ہو یا لڑکیاں اپنی صحت کو کسی گہنہ سے کم نہ سمجھیں۔ ڈاکٹر میناکشی این صدر شعبہ کامرس کالج ہذا نے اس موقع پر دکن ریڈیو کی ٹیم کو مبارکباد دی کہ اس طرح کے پروگرام سے صنف نازک میں شعور برپا ہوگا اور وہ تازندگی اس کی اہمیت کو جان جائیں گی۔ اس پروگرام میں پروین محمد سماجی جہدکار نے طالبات سے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ انسان کی صحت کا دارومدار صاف صفائی پر منحصر ہے۔ جب تک خود انسان اپنے ماحول اور جسم کو صاف ستھرا نہیں رکھے گا تب تک ہمارا معاشرہ بھی صحتمند نہیں بن پائے گا۔ انہوں نے لڑکیوں سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ سال میں ایک یا دو بار اپنی صحت کی جانچ یعنی ہیلت چیک اپ کرنا ضروری ہے۔ اس سے یہ ظاہر ہوگا کہ آپ کی صحت کا کیا معیار ہے۔ اگر کسی کو کوئی بیماری ظاہر ہو تو وہ مایوس نہ ہوں بلکہ اس کے علاج پر اپنی توجہ مرکوز کریں جس سے خود کو بھی صحتمند رکھ پائیں گے اور علاج سے مرض کو بھی دور کرپائیں گے۔ شعبہ کامرس و شعبہ کیمسٹری و دیگر طالبات نے ڈاکٹر سیدہ ثناء صدیقہ سے تبادلہ خیال کرتے ہوئے مختلف امراض کی تفصیل حاصل کی اور اس کے تدارک کے بارے میں پوچھا۔ اس شعور بیداری مہم میں دکن ریڈیو کے اسٹیشن منیجر مسٹر زاہد فاروقی سوپروائزر مسٹر فہیم انصاری اور آر جے ڈی لطیف النساء، مس منجو، ریٹارانی، گیتانجلی، عائشہ بیگم، آسیہ ثناء و دیگر شامل تھے۔ آخر میں مس یاسمین بانو نے تمام شرکاء و انتظامیہ کا شکریہ ادا کیا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT