Monday , August 21 2017
Home / ہندوستان / داعش سے رغبت، 150 ہندوستانی شہریوں پر سیکوریٹی کی نظر

داعش سے رغبت، 150 ہندوستانی شہریوں پر سیکوریٹی کی نظر

تلنگانہ کا ایک نوجوان لڑائی میں فوت، دوسرا ہنوز سرگرم

نئی دہلی ۔ 18 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) ملک کے تقریباً 150 نوجوان خوفناک دہشت گرد تنظیم آئی ایس سے مبینہ رغبت کے پیش نظر سیکوریٹی ایجنسیوں کی خفیہ نظر میں ہے۔ انٹلیجنس ایجنسیوں کی تیار کردہ رپورٹ کے مطابق 150 افراد جن میں جنوبی ہند سے تعلق رکھنے والوں کی اکثریت ہے، سمجھا جاتا ہیکہ آئی ایس آئی ایس سے رغبت رکھتے ہیں اور اس کی سرگرمیوں کے بارے میں ہمدردانہ خیالات کے حامل ہیں۔ ایک عہدیدار نے کہا کہ ’’ان میں سے اکثر براہ آن لائن آئی ایس آئی ایس کارکنوں سے باضابطہ رابطہ میں ہے۔ چنانچہ ہم نے ان سب پر کڑی نظر رکھی ہے‘‘۔ تاحال 23 ہندوستانی عراق اور شام میں آئی ایس آئی ایس کے زیرقبضہ علاقوں کا سفر کرچکے ہیں جن کے منجملہ 6 وہیں ہلاک ہوگئے جبکہ ایک ممبئی میں واقع اپنے گھر واپس آ گیا۔ دیگر 30 ہندوستانی ایسے ہیں جن کی آئی ایس آئی ایس عناصر نے ذہن سازی کی ہے اور انہیں مشرق وسطیٰ کے اس جنگی خطہ کا سفر کرنے سے روک دیا گیا ہے۔ آئی ایس آئی ایس کیلئے فی الحال شام میں لڑائی میں مصروف ہندوستانیوں میں کلیان (ممبئی) کے علاوہ آسٹریلیا میں مقیم ایک کشمیری اور تلنگانہ، کرناٹک کا ایک ایک نوجوان بھی شامل ہے۔ آئی ایس آئی ایس کیلئے لڑتے ہوئے مارے جانے والے 6 ہندوستانیوں میں انڈین مجاہدین کے 3 دہشت گرد سلطان اجمیر شاہ اور بابا ساجد بھی شامل ہیں جنہوں نے پاکستان میں داعش سے وابستگی اختیار کی۔ دیگر مہلوکین میں دو کا تعلق مہاراشٹرا اور ایک کا تلنگانہ سے ہے۔ متحدہ عرب امارات نے آئی ایس آئی سے مشتبہ رابطوں کی بنیاد پر چار ہندوستانیوں کو ملک بدر کردیا تھا ۔ ان میں ایک حیدرآبادی لڑکی افشاں جبیں عرف نکی جوزف بھی شامل ہے۔

TOPPOPULARRECENT