Tuesday , August 22 2017
Home / شہر کی خبریں / درگاہ حضرت برہنہ شاہؒ کی کمیٹی میں مقامی نمائندگی شامل کی جائے : ڈپٹی چیف منسٹر

درگاہ حضرت برہنہ شاہؒ کی کمیٹی میں مقامی نمائندگی شامل کی جائے : ڈپٹی چیف منسٹر

سکریٹری اقلیتی بہبود و سی ای او وقف بورڈ کو ہدایت ، مقامی افراد کے وفد کا احتجاج
حیدرآباد ۔ 11۔ جولائی (سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے وقف بورڈ کے عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ درگاہ حضرت برہنہ شاہؒ کی کمیٹی کے سلسلہ میں مقامی افراد کی نمائندگی قبول کریں۔ مقامی افراد کے ایک وفد نے بزرگ شخصیت واحد خاں کی قیادت میں ڈپٹی چیف منسٹر سے ملاقات کی اور وقف بورڈ کی جانب سے قائم کردہ نئی کمیٹی میں متنازعہ اور  غیر متعلقہ افراد کی شمولیت کی شکایت کی۔ وفد نے بتایا کہ وقف بورڈ کی جانب سے سابقہ کمیٹی کو مختلف بے قاعدگیوں کے سبب منسوخ کیا گیا تھا لیکن جو نئی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے، ان میں کئی غیر مقامی افراد ہے اور کمیٹی کے صدر پر کئی الزامات ہیں۔ وفد نے بتایا کہ مقامی سیاسی جماعت کے دباؤ میں وقف بورڈ نے اس کمیٹی کو منظوری دی ہے جس سے مقامی افراد میں سخت ناراضگی پائی جاتی ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے سکریٹری اقلیتی بہبود اور چیف اگزیکیٹیو آفیسر وقف بورڈ کو ہدایت دی کہ ان شکایات کا جائزہ لیتے ہوئے ضروری کارروائی کریں۔ بعد میں دکن وقف پروٹیکشن کمیٹی کے صدر عثمان الہاجری کی قیادت میں مقامی افراد نے سکریٹری اقلیتی بہبود سے ملاقات کی اور سخت احتجاج کیا۔ مقامی افراد نے وقف بورڈ کے رویہ کو افسوسناک قرار دیتے ہوئے سوال کیا کہ جس کمیٹی کو منسوخ کردیا گیا، اس کے بعض ارکان کو کس طرح نئی کمیٹی میں شامل کیا گیا جبکہ ان پر بے قاعدگیوں کے الزامات ہیں۔ مقامی افراد نے کمیٹی کے غیر متعلقہ ارکان اور سابق کمیٹی کے معطل شدہ ارکان کے ناموں کی فہرست حوالہ کی۔ انہوں نے بتایا کہ ایسے افراد کو کمیٹی میں شامل کیا گیا ہے جو کبھی درگاہ پر حاضری نہیں دیتے اور وہ نہ صرف اراضیات پر قبضے بلکہ کئی مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث ہیں۔ وفد نے درگاہ کی اوقافی اراضی کے تحفظ اور موثر انتظامات کیلئے مقامی افراد پر مشتمل کمیٹی تشکیل دینے کا مطالبہ کیا ہے۔ احتجاجیوں نے سکریٹری اقلیتی بہبود کی کار کے روبرو احتجاج کیا۔ بعد میں انہوں نے چیف اگزیکیٹیو آفیسر وقف بورڈ سے نمائندگی کی۔ بتایا جاتا ہے کہ مقامی سیاسی جماعت کے دباؤ میں سکریٹری نے متنازعہ کمیٹی کو منظوری دی ہے۔

TOPPOPULARRECENT