Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / درگاہ حضرت کالے شاہ اور متصل قبرستان کی اراضی وقف بورڈ کی تحویل

درگاہ حضرت کالے شاہ اور متصل قبرستان کی اراضی وقف بورڈ کی تحویل

کمیٹی معطل، قبرستان میں مسجد کی تعمیر کی اجازت نہیں، نئی کمیٹی پر رپورٹ کی طلبی
حیدرآباد۔/23جولائی، ( سیاست نیوز) سکریٹری اقلیتی بہبود و عہدیدار مجاز وقف بورڈ نے درگاہ حضرت کالے شاہ ؒ اور اس سے متصل قبرستان واقع پیٹلہ برج کو فوری راست نگرانی میں لینے وقف بورڈ عہدیداروں کو ہدایت دی ہے۔ مقامی افراد کی نمائندگی پر انہوں نے اندرون تین دن راست نگرانی میں لینے کی ہدایت دی۔ واضح رہے کہ 17جون کو چیف ایکزیکیٹو آفیسر وقف بورڈ نے متعلقہ انسپکٹر آڈیٹر صابر حسین کو انتظامات راست نگرانی میں لینے کی ہدایت دی تھی لیکن آج تک ان احکامات پر عمل آوری نہیں کی گئی۔ بتایا جاتا ہے کہ مختلف بے قاعدگیوں کی شکایات ملنے پر وقف بورڈ نے کمیٹی کو معطل کردیا ہے۔ عہدیدار مجاز نے قبرستان کے احاطہ میں مسجد کی تعمیر کی کوششوں پر سخت ناراضگی کا اظہار کیا۔ قبرستان میں قبروں کو مسمار کرتے ہوئے مسجد کی تعمیر اور بعض کمرشیل تعمیرات کی کوشش کی جارہی تھی اور اس سلسلہ میں بیرون ملک مقیم افراد سے لاکھوں روپئے وصول کئے گئے۔ قبرستان میں مسجد کی تعمیر کے خلاف مقامی افراد نے فتویٰ بھی حاصل کیا ہے اور عہدیدار مجاز وقف بورڈ نے بھی واضح کردیا کہ تعمیر کی قطعی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ انہوں نے درگاہ و قبرستان کیلئے نئی کمیٹی کی تشکیل کیلئے تفصیلی رپورٹ طلب کی ہے۔ اطلاعات کے مطابق گذشتہ 9 برسوں سے موجود کمیٹی نے کئی بے قاعدگیوں کا ارتکاب کیا۔ درگاہ حضرت کالے شاہ صاحبؒ کے تحت 824-1مربع گز اراضی موجود ہے جو وقف ہے۔ بعض مفادات حاصلہ اس اراضی پر قبضہ کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔مقامی افراد کی نمائندگی کے بعد چیف ایکزیکیٹو آفیسر نے رپورٹ طلب کی جس کی بنیاد پر کمیٹی کو معطل کیا گیا۔ وقف بورڈ کی ذمہ داری ہے کہ وہ اس اراضی کا تحفظ کرے اور حقیقی خدمت گذاروں پر مشتمل نئی کمیٹی تشکیل دے۔

TOPPOPULARRECENT