Saturday , September 23 2017
Home / ہندوستان / دفعہ ۔35 اے :مرکز کے موقف پر نیشنل کانفرنس کی تشویش

دفعہ ۔35 اے :مرکز کے موقف پر نیشنل کانفرنس کی تشویش

وفد کی راج ناتھ سنگھ سے ملاقات ، مسئلہ کشمیر پر بات چیت شروع کرنے کی خواہش

سرینگر۔ 10 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) اپوزیشن نیشنل کانفرنس کے ایک وفد نے سابق چیف منسٹر عمر عبداللہ کی قیادت میں آج مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ سے ملاقات کرتے ہوئے دفعہ 35اے  کے بارے میں تشویش سے واقف کرایا۔ دستور کی دفعہ 35اے  کے تحت جموں و کشمیر کو خصوصی موقف دیا گیا ہے اور وفد نے اس دفعہ کی بھرپور مدافعت کی۔ اس کی دستوری، سیاسی اور تاریخی اہمیت واضح کرتے ہوئے سپریم کورٹ میں مرکز کے اختیار کردہ موقف ناراضگی اور تشویش کا اظہار کیا۔ اجلاس کے بعد نیشنل کانفرنس کے ترجمان نے بتایا کہ عمر عبداللہ نے وادی کی ابتر اور مسلسل بگڑتی صورتحال کو بھی اجاگر کیا۔ وفد نے تمام فریقین کے ساتھ بلالحاظ نظریات مسئلہ کشمیر پر بات چیت کی ضرورت ظاہر کی۔ انہوں نے زور دیا کہ نئی دہلی اور اسلام آباد کو سنجیدگی سے تمام مسائل بشمول کشمیر پر بات چیت کا احیاء کرنا چاہئے۔ انہوں نے بتایا کہ پارٹی وفد نے ریاست کی خودمختاری کو بحال کرنے کیلئے جدوجہد کے عزم کا اعادہ کیا اور مرکزی حکومت سے خواہش کی ہے کہ ان تمام فیصلوں کو واپس لیا جائے جن کے ذریعہ ریاست کی خودمختاری متاثر ہوتی ہے۔ ان میں گڈس اینڈ سرویسیس ٹیکس تازہ مثال ہے۔

TOPPOPULARRECENT