Monday , July 24 2017
Home / جرائم و حادثات / دلت نوجوان مدھوکر کی لاش کا دوبارہ پوسٹ مارٹم

دلت نوجوان مدھوکر کی لاش کا دوبارہ پوسٹ مارٹم

حیدرآباد 10 اپریل (یواین آئی ) تلنگانہ کے پداپلی کے منتھنی کے دلت نوجوان مدھوکر کی لاش کا آج دوبارہ پوسٹ مارٹم کروایا گیا ۔پولیس ، مقامی افسروں نے اس کے انتظامات کئے ۔عثمانیہ اور کاکتیہ میڈیکل کالج کے ماہر ڈاکٹرس کی نگرانی میں اس نوجوان کی لاش کو قبر سے نکال کر اس کا دوبارہ پوسٹ مارٹم انجام دیا گیا ۔حیدرآباد ہائی کورٹ نے ہدایت دی تھی کہ اس کی لاش کا دوبارہ پوسٹ مارٹم کرتے ہوئے مہر بند لفافے میں اس کی رپورٹ عدالت میں پیش کی جائے ۔مدھوکر کے والدین نے اس کی موت پر شبہات ظاہر کرتے ہوئے ہائی کورٹ میں عرضی داخل کی تھی اور ان کے بیٹے کی لاش کے دوبارہ پوسٹ مارٹم کروانے کی خواہش کی تھی ۔ہائی کورٹ کی ہدایت پر کریم نگر چیف جیوڈیشل مجسٹریٹ کی نگرانی میں دوبارہ پوسٹ مارٹم کے انتظامات کئے گئے اور اس سارے عمل کی ویڈیو گرافی بھی کی گئی ۔200ملازمین کے بندوبست کے درمیان لاش کا دوبارہ پوسٹ مارٹم کیا گیا۔مدھوکر کے والدین نے کہاکہ اس کا قتل کیا گیا ۔ان کا کہنا ہے کہ مدھوکر وینکٹ پور کی رہنے والی ایک لڑکی سے محبت کرتا تھا جس پر اس لڑکی کے رشتہ داروں نے مدھوکر کا قتل کیا ہے جبکہ دوسری طرف پولیس کا کہنا ہے کہ اس دلت نوجوان نے خودکشی کی ہے ۔اس کے دوبارہ پوسٹ مارٹم کے سلسلہ میں اس نوجوان کے والدین کے مطالبہ کی حمایت عوامی تنظیموں اور دلتوں کی تنظیموں نے کی ۔مدھوکر کے والدین نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مدھوکر کے جسم پر مارپیٹ کے نشان تھے ۔اس نے خودکشی نہیں کی بلکہ اس کا قتل کیا گیا۔اسی دوران ایس پی سندھو شرما نے واضح کیا ہے کہ اس معاملہ میں 60افراد کے علاوہ مدھوکر سے محبت کرنے والی لڑکی سے بھی پوچھ تاچھ کی جائے گی ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT