Wednesday , August 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / دوررسالت سے ہی بیس رکعت نماز تروایح پر عمل ,

دوررسالت سے ہی بیس رکعت نماز تروایح پر عمل ,

کریم نگر ۔ 23 مارچ ( ذریعہ فیاکس) محمدعبدالحمید قاسمی کی اطلاع کے بموجب جامعہ صدیقیہ فیض العلوم کریم نگر کے زیراہتمام ایک روزہ ضلعی تربیتی پروگرام بصدارت مولانا احمد عبداللہ طیب قاسمی منعقد ہوا جس میں مفتی محمد جمال الدین قاسمی ’’ بیس رکعت نماز تراویح کا اہتمام سنن و آثار کی روشنی میں ‘‘ کے عنوان سے اپنے مخصوص انداز میں نماز تراویح کے پس منظر کو اور عہد بہ عہد بالترتیب تیرھویں صدی تک کے محدثتیں اور فقہاء کے نام کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ حضورﷺ کے زمانہ سے تیرھویں صدی تک بس رکعت نماز تراویح پر عمل تھا ۔ سب سے پہلے تراویح کا نام حضرت علیؓ نے استعمال کیا ہے ‘ ورنہ پہلے قیام رمضان کا اطلاق ہوتا تھا ۔ بخاری شریف میں موجود حضرت عائشہؓ کی حدیث کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ تراویح سونے سے پہلے اور تہجد سوکر اُٹھنے کے بعد پڑھی جاتی ہے ۔تہجد کی نماز تنہا اور تراویح کی نماز جماعت کے ساتھ پڑھی جاتی ہے ۔ اس کے بعد مفتی یحییٰ نعمانی نے ضعیف حدیث کے اقسام اور ان کے احکام کے عنوان پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ آج کسی غلط بات پر پروپگنڈہ اس طرح کیا جاتا ہے کہ اصل بات چھپٹ جاتی ہے ‘بالکل اسی طرح حدیث ضعیت کا مسئلہ ہے ۔ رسول اللہﷺ کے دین کو قیامت تک محفوظ رکھنے کا انتظام اللہ نے فرمایا ہے ۔ حفاظت حدیث کے طریقوں کو اللہ نے اس امت کے علماء پر الہام فرمایا ‘ش روع زمانہ میں اس بات کا خاص خیال رکھا گیا ۔ روای ثقہہ ہو ‘ جھوٹ بولنے والا نہ ہو اور حافظہ تیز ہو ۔ حدیث ضعیف کے بہت سے درجے ہیں ۔ امام ابن حبانؓ نے 42 ‘ زین الدین العراقی نے 46 ‘بعض نے 36 حدیث ضعیف کی بیان کی ہیں ۔ بعض حدیث ضعیف تقریباً صحیح حدیث کے قریب ہوتی ہیں۔ ایک گہرے علم رکھنے والے شخص کو اس کا علم ہوتا ہے ‘مگر آج بعض غیر مقلدین چند حدیثیں یاد کرلیں اور کہہ دیا یہ حدیث ضعیف ہے ۔اس کے بعد مولانا خواجہ نذیر الدین نے قرات خلف الامام کی شرعی حیثیت کے عنوان پر حدیث کی روشنی میں مثالوں سے سمجھاتے ہوئے یہ ثابت کیا کہ امام کے پیچھے مقتدی کا قرات کرنا صحیح نہیں ۔ دوسری نشست میں مفتی یحییٰ نعامانی تقلید کی شرعی حیثیت و حقیقت کے عنوان پر مدلل و محقق گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تقلید انسان کی فطری ضرورت ہے ۔ آخر میں صدر جلسہ کی مختصر بات رہی جس میں کہا کہ ظاہر کے ساتھ باطن کی فکر کرنا بھی ضروری ہے ۔ صدر جلسہ کی دُعا پر اس پروگرام کا اختتام عمل میں آیا ۔

TOPPOPULARRECENT