Wednesday , September 20 2017
Home / عرب دنیا / دولت اسلامیہ نے مندر کے پجاری کے قتل کی ذمہ داری لی

دولت اسلامیہ نے مندر کے پجاری کے قتل کی ذمہ داری لی

ڈھاکہ۔ 22 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) دولت اسلامیہ نے آج بنگلہ دیش کے ایک ہندو مندر کے پجاری کے قتل کی ذمہ داری قبول کی جو ہندوستان کی سرحد کے قریب واقع ہے۔ اس طرح دولت اسلامیہ کا کسی ہندو عبادت گاہ کو نشانہ بنانے کا یہ پہلا واقعہ ہے۔ دریں اثناء امریکہ کے خانگی سائیٹ انٹلیجنس گروپ نے عربی زبان میں دولت اسلامیہ کا بیان شائع کیا ہے جہاں 50 سالہ گیانیشور رائے کو سونابوٹا گاؤں میں صبح کی اولین ساعتوں میں موت کے گھاٹ اتار دیا گیا تھا۔ اس واقعہ میں دو ہندو عقیدتمند زخمی بھی ہوئے تھے۔ دولت اسلامیہ کے ذریعہ جاری کئے گئے عربی بیان کے انگریزی ترجمہ کے مطابق ’’ایک سیکوریٹی آپریشن‘‘ میں خلافت کے سپاہیوں نے دیوی گنج مندر کے بانی اور سربراہ کو موت کے گھاٹ اتار دیا۔ گیانیشور رائے نے 1998ء میں مندر قائم کیا تھا اور اس وقت سے ہی وہ مندر کے بڑے پجاری کی حیثیت سے اپنے فرائض انجام دے رہے تھے۔ صبح کی پوجا کے وقت قتل کا واقعہ پیش آیا۔ حکام نے اب تک قتل کی وجوہات کا پتہ نہیں چلایاہے۔

TOPPOPULARRECENT