Monday , August 21 2017
Home / ہندوستان / دولت کے بل بوتے پر مسلمانوں میں پھوٹ ڈالنے آر ایس ایس کی کوشش

دولت کے بل بوتے پر مسلمانوں میں پھوٹ ڈالنے آر ایس ایس کی کوشش

اختلافات پیدا کرے علماء کو خطیر رقومات ، مسلمان چوکس رہیں : منظور عالم
دیوبند 16 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) آل انڈیا ملی کونسل کے جنرل سکریٹری منظور عالم نے کہا ہے کہ دنیا بھر کے تمام مسلمانوں میں آج ایک عجیب قسم کی بے چینی، غیر یقینی اور عدم اطمینانی پائی جارہی ہے جو دراصل ساری دنیا میں اسلام کے خلاف پیدا ہونے والی نفرت اور خوف کا نتیجہ ہے اور اسلام سے خوف زدہ عناصر کرۂ ارض سے اسلام کا نام و نشان مٹادینے کے درپے ہیں۔ پرنٹ اور الیکٹرانک میڈیا میں مسلمانوں کے بارے میں آنے والی خبروں کے تجزیہ کے ذریعہ اس صورتحال کو صحیح انداز میں سمجھا جاسکتا ہے۔ 90 فیصد میڈیا اسلام اور مسلمانوں کے خلاف ہے۔ ڈاکٹر منظور عالم جو ایک دینی تعلیمی ادارہ دارالعلوم ذکریہ میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے، مزید کہاکہ ’’یہ میڈیا کی طاقت ہی تھی جو بی جے پی کو برسر اقتدار آئی۔ مسلمانوں میں پھوٹ ڈالنے کے لئے بعض گوشوں کی طرف سے کی جانے والی مبینہ کوششوں کا اشارہ کرتے ہوئے انھوں نے مسلمانوں اور بالخصوص مسلم قائدین پر زور دیا کہ وہ آر ایس ایس، اس کے نظریات اور ارادوں کو سمجھنے کی کوشش کریں۔ انھوں نے دعویٰ کیاکہ بعض (ضمیر فروش) علماء کو آر ایس ایس خطیر رقومات دیتے ہوئے ملت اسلامیہ کو مسلکی بنیاد پر منقسم کرنے کے کام لے رہی ہے۔ اس مقصد کے لئے مذہبی، مسلکی، نظریاتی و سیاسی اختلافات پیدا کئے جارہے ہیں تاکہ ملت اسلامیہ ایک پلیٹ فارم پر کبھی متحد نہ ہوسکے اور ایک منقسم ملت کی حیثیت سے ہمیشہ کمزور رہے۔ اس کے ساتھ یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ دیگر طبقات کے مقابلے مسلمان تعلیمی طور پر زیادہ پسماندہ ہیں جس کے باوجود بھی ساری دنیا مسلمانوں سے ہی خوفزدہ ہے اور اُنھیں مٹانے کی ممکنہ کوشش کررہی ہے۔ ڈاکٹر منظور عالم نے کہاکہ ’’چنانچہ آپ کے لئے ضروری ہے کہ اسلام کی صحیح تعلیمات حاصل کرتے ہوئے دنیا کو امن و ہم آہنگی سے متعلق اسلام کے پیغام سے روشناس کروائیں‘‘۔ انھوں نے مسلم نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ دینی و عصری تعلیم پر یکساں توجہ دیں۔ اپنی مادری زبان کے علاوہ انگریزی، ہندی اور حتیٰ کہ سنسکرت پر بھی عبور حاصل کریں تاکہ اپنے ابنائے وطن کو اسلام اور مسلمانوں کی حقیقی تصویر دکھائیں۔

TOPPOPULARRECENT