Saturday , August 19 2017
Home / جرائم و حادثات / دونوں شہروں میں رہزنی میں ملوث عادی رہزن بھائی گرفتار

دونوں شہروں میں رہزنی میں ملوث عادی رہزن بھائی گرفتار

مسروقہ زیورات برآمد ، پی ڈی ایکٹ کا استعمال : کمشنر پولیس
حیدرآباد ۔ /17 نومبر (سیاست نیوز) دونوں شہروں میں رہزنی کی وارداتوں میں ملوث عادی رہزن بھائیوں کو حیدرآباد پولیس نے گرفتار کرلیا اور ان کے قبضے سے 800 گرام مسروقہ طلائی زیورات برآمد کرلئے ۔ کمشنر پولیس حیدرآباد مسٹر ایم مہیندر ریڈی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ /17 جولائی کو نامعلوم رہزنوں نے 40 سالہ پی سمترا کو اس وقت نشانہ بنایا تھا جو اپنے بیٹے کے ہمراہ موٹر سائیکل پر جارہی تھی ۔ اس واقعہ میں سمترا شدید زخمی ہوگئی تھی اور دوران علاج وہ فوت ہوگئی تھی ۔ عثمانیہ یونیورسٹی پولیس نے اس واقعہ سے متعلق مقدمہ درج کرتے ہوئے تحقیقات کا آغاز کیا تھا اور ٹاسک فورس ایسٹ زون ٹیم نے اس واردات میں ملوث بدنام زمانہ عادی رہزن حبیب عباس عرف شیخ فیضان ساکن چندرائن گٹہ بابا نگر کو گرفتار کرلیا ۔ پولیس نے اس عادی رہزن کے ایک اور بھائی حبیب حسن کو بھی گرفتار کرلیا ۔ کمشنر پولیس نے بتایا کہ حبیب عباس اور حبیب حسن دونوں بھائی ہیں اور وہ 200 سے زائد رہزنی اور سرقہ کی وارداتوں میں ملوث ہیں ۔ یہ دونوں اورنگ آباد میں ملبوسات کا کاروبار کیا کرتے تھے اور شہر میں مقفل مکانات کو نشانہ بناتے ہوئے قفل شکنی کے ذریعہ لاکھوں روپئے مالیتی طلائی زیورات کا سرقہ کیا کرتے تھے ۔ سابق میں دونوں بھائیوں کو حیدرآباد پولیس نے کئی مرتبہ گرفتار کیا تھا اور وہ ضمانت پر رہا ہونے کے بعد دوبارہ رہزنیوں میں ملوث ہوگئے ۔ مسٹر مہیندر ریڈی نے بتایا کہ دونوں شہروں میں راہ چلتی خواتین کو نشانہ بناتے ہوئے ان کے گلے سے طلائی چین اڑانے کیلئے ہونڈا شائن موٹر سائیکل کا استعمال کیا کرتے تھے ۔ رہزنوں سے مسروقہ مال خریدنے والے اورنگ آباد کے جیویلری شاپ مالک عمران عثمان شیخ کو بھی گرفتار کرلیا گیا ہے ۔ کمشنر پولیس نے بتایا کہ گرفتار رہزنوں کے خلاف بھی پی ڈی ایکٹ استعمال کیا جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT