Wednesday , May 24 2017
Home / شہر کی خبریں / دو گواہوں کو دوبارہ طلب کرنے کی درخواست

دو گواہوں کو دوبارہ طلب کرنے کی درخواست

وکلائے دفاع اور اسپیشل پبلک پراسکیوٹر کے مابین بحث
حیدرآباد ۔ /18 اپریل (سیاست نیوز) چندرائن گٹہ حملہ کیس کی سماعت کے دوران آج وکیل دفاع اور اسپیشل پبلک پراسیکیوٹر کے درمیان دو گواہوں کو دوبارہ عدالت میں طلب کرنے کی درخواست پر زبردست بحث ہوئی ۔ عدالت کی کارروائی کے آغاز کے ساتھ ہی اسپیشل پبلک پراسیکیوٹر مسٹر اوما مہیشور راؤ نے ایک درخواست داخل کرتے ہوئے گواہ ڈاکٹر سلیم اور سب انسپکٹر ای شنکر کو عدالت میں دوبارہ طلب کرنے اور ان کا بیان قلمبند کرنے کی گزارش کی ۔ اس درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے وکلائے دفاع ایڈوکیٹ جی گرو مورتی اور ایڈوکیٹ راگھویندر ریڈی نے استدلال پیش کیا کہ کیس کے تمام گواہوں بشمول آخری گواہ کے بیان قلمبند کئے جاچکے ہیں اور پرانے گواہوں کوطلب کرنے سے عدالت کا قیمتی وقت ضائع ہوگا ۔ وکلائے دفاع نے بتایا کہ پبلک پراسیکیوٹر عدالت کو گمراہ کرنے کی غرض سے ڈاکٹر سلیم کو جن کا بیان اور جرح 16 ڈسمبر 2016 ء کو مکمل ہوچکی ہے، دوبارہ عدالت میں طلب کرکے وقت ضائع کرنا چاہتے ہیں ۔ وکلائے دفاع اور پبلک پراسیکیوٹر کے درمیان زبردست بحث ہوئی جس کے بعد 7 ویں ایڈیشنل میٹروپولیٹین سیشن جج نے کیس کی سماعت کو کل تک کیلئے ملتوی کردیا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT