Wednesday , August 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / دھان خریدی مرکز پر کسان کی مشتبہ حالت میں موت

دھان خریدی مرکز پر کسان کی مشتبہ حالت میں موت

کانگریس پارٹی کی جانب سے احتجاج ، حکومت پر نااہلی کا الزام
کاماریڈی:17؍ مئی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کاماریڈی ضلع کے بی بی پیٹ منڈل کے جنگائوں کے ایک کسان کی دھان کے خریدی مرکز پر مشتبہ حالت میں موت واقع ہوجانے پر کانگریس پارٹی کی جانب سے احتجاج کرتے ہوئے حکومت کی نا اہلی کی وجہ سے کسانوں کی موت واقع ہونے کا الزام عائد کیا ۔ تفصیلات کے بموجب حکومت نے ربیع کے سیزن میں کی گئی کاشت اور دھان کی خریدی کیلئے بڑے پیمانے پر متحدہ ضلع میں 422 دھان کے خریدی مراکز قائم کئے اور کسان بڑے پیمانے پر اپنے دھان کو فروخت کرنے کیلئے خریدی مراکز پر پہنچ کر دھان کو فروخت کرنے کیلئے منتظر ہے ۔ خریدی میں ہورہی تاخیر کی وجہ سے کسانوں کو 5 روز تک انتظار کرنا پڑرہا ہے ۔ بی بی پیٹ منڈل کے جنگائوں کے پوچیا ایک ہفتہ قبل دھان کو فروخت کرنے کیلئے خریدی مراکز پر لایا تھا اور اس کا نمبر 155 تھا اور 5 روز سے اپنے دھان کی خریدی کا منتظر تھا اور صبح سے شام تک اس کے اناج کے پاس اپنے نمبر کا انتظار کررہا تھا شام کے اوقات میں ہمیشہ کی طرح کھانے کے بعد اپنے اناج کی رکھوالی کیلئے یہی پر شب بسری کی اور 5 دن سے دھوپ میں بیٹھ رہا تھا ۔ کل رات کھانے کے بعد گھر سے اناج کی رکھوالی کیلئے نکلا ہوا تھا اور دھان کے ڈھیر پر ہی محوخواب میں ہی فوت ہوگیا۔ آج صبح کسانوں نے اسے جگانے کی کوشش کی تو یہ مردہ پایا گیا جس پر فوری افراد خاندان کو اطلاع دی اور افراد خاندان یہاں پہنچ کر پولیس میں شکایت کی پولیس بی بی پیٹ یہاں پہنچ کر بعد پنچنامہ نعش کو پوسٹ مارٹم کیلئے منتقل کیا ۔ دھوپ کی شدت کی وجہ سے ہی پوچیا کی موت واقع ہونے کا عہدیداروں نے شک ظاہر کیا۔ جبکہ متحدہ ضلع میں بڑے پیمانے پر دھان کی پیداوار ہوئی ہے اور خریدی مراکز پر کسانوں کو اپنے دھان کے فروخت کیلئے ایک ایک ہفتہ انتظار کرنا پڑرہا ہے عہدیداروں نے خریدی مراکز پر سہولتیں فراہم کرنے میں ناکام ہونے کا بھی الزام عائد کررہے ہیں ۔ کانگریس پارٹی میں اس واقعہ کے خلاف سخت کااحتجاج کرتے ہوئے کہا کہ ٹی آرایس کے دور میں کسانوں کو یکساں طور پر نظر انداز کیا جارہا ہے اور اقل ترین قیمت کی ادائیگی میں ناکام ہونے کے علاوہ خریدی مراکز پر عدم سہولتوں کی عدم فراہمی کی وجہ سے کسانوں کی موت واقع ہورہی ہے دو ہفتوں میں یہ دوسرا واقعہ ہے ۔ قبل ازہلدی کے کسان کی موت واقع ہوئی تو کاماریڈی میں دھان کے کسان کی موت واقع ہوئی ہے کانگریس پارٹی نے اس خصوص میں آرڈی او کاماریڈی کو ایک یادداشت پیش کرتے ہوئے پوچیا کے خاندان کو10 لاکھ روپئے ایکس گریشیاء دینے کا مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT