Tuesday , September 26 2017
Home / کھیل کی خبریں / دھونی کا ٹیم سے ایشیاء اور ورلڈکپ میں فتوحات کو برقرار رکھنے کا مطالبہ

دھونی کا ٹیم سے ایشیاء اور ورلڈکپ میں فتوحات کو برقرار رکھنے کا مطالبہ

نئی دہلی۔17 فروری (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان مہندر سنگھ دھونی اپنی ٹیم سے حالیہ شاندار فارم کو برقرار رکھنے کے خواہاں ہیں اور کہا ہے کہ سری لنکا کیخلاف بہترین کارکردگی کے تسلسل نے بھرپور اعتماد فراہم کر دیا ہے جسے وہ آنے والے میگا ایونٹس میں بھی جاری رکھنا چاہیں گے۔ سری لنکا کیخلاف سیریز کا پہلا میچ پونے میں ہارنے کے بعد میزبان ٹیم نے بھرپور انداز سے واپسی کی  اور سیریز کے اگلے دونوں میچز جیت کر سیریز پر 2-1  سے قبضہ کیا۔ دھونی نے مزید کہا ہے کہ سری لنکا کیخلاف سیریز میں ان کے کھلاڑیوں نے بہترین کھیل پیش کیا اور کچھ نئے چہرے بھی سامنے آئے اور اب ان کی خواہش ہے کہ ایشیاء کپ میں بھی ان کی ٹیم  اسی بہترین کھیل کو جاری رکھے جس کا مظاہرہ اس نے حالیہ عرصے میں آسٹریلیا اور سری لنکا کیخلاف کیا ہے۔ ہندوستانی ٹیم ایشیاکپ مقابلوں میں بنگلہ دیش کیخلاف اپنی مہم کا آغاز کرنے کے دو دن بعد روایتی حریف پاکستان کا سامنا کرے گی اور ان دو ٹیموں کیخلاف فتوحات ٹرافی تک رسائی کیلئے اہم سمجھی جا رہی ہیں۔ دھونی نے کہا ہے کہ انکی  ٹیم کی حالیہ کارکردگی نے  ایشاء کپ اور ورلڈ کپ کیلئے بھرپور اعتماد فراہم کر دیا ہے اور ٹیم خطابات کی پسندیدہ ٹیموں میں شامل ہوچکی ہے۔ دریں اثناء فی الوقت بولنگ کے علاوہ  بیٹنگ میں  انہیں کسی بھی شعبے کی جانب سے کوئی فکر لاحق نہیں کیونکہ نئے کھلاڑیوں ہردیک پانڈیا اور جسپریت بمراہ نے آشیش نہرا کے ساتھ اپنی افادیت منوا لی ہے

اور بیٹسمینوں کی جانب سے اچھی بیٹنگ کا مظاہرہ بھی ایک اہم عنصر ہے لیکن وہ ورلڈ کپ میں بہتر کارکردگی کیلئے ایشیاء کپ میں سامنے آنے والے نتائج  پر توجہ رکھیں گے۔یاد رہے ہندوستانی ٹیم نے دورۂ آسٹریلیا پر ونڈے سیریز میں 4-1 کی شکست برداشت کرنے کے باوجود میزبان ٹیم کے خلاف کھیلی گئی تین مقابلوں کی ٹوئنٹی 20 سیریز میں میزبان ٹیم کو ریکارڈ ساز 3-0 کی شکست سے دوچار کیا۔ وطن واپسی پر ایشیاء کپ اور ورلڈ کپ کے ضمن میں پڑوسی ملک سری لنکا کے خلاف کھیلے گئے تین مقابلوں کی ٹوئنٹی 20 سیریز میںپہلے مقابلے کی شکست کے باوجود مابقی دو مقابلوں میں انتہائی شاندار مظاہرے کرتے ہوئے متواتر دوسری ٹوئنٹی 20 کامیابی حاصل کی ہے ۔ سیریز کے آخری دو مقابلوں میں خصوصاً کپتان مہیدر سنگھ دھونی کی قیادت اور وکٹوں کے پیچھے مظاہرے قابل ستائش رہے کیونکہ جس وقت سری لنکائی ٹیم ہمالیائی اسکور کا تعاقب کررہی تھی اُس موقع پر روی چندرن اشون کے ذریعہ بولنگ کا آغاز کروانے کا فیصلہ صحیح ثابت ہوا ۔ بعد ازاں وشاکھاپٹنم میں کھیلے گئے سیریز کے فیصلہ کن مقابلے میں جس وقت مہمان ٹیم ابتدائی اننگز کا آغاز کررہی تھی اُس موقع پر بھی اشون سے بولنگ کروانے کافیصلہ درست ثابت ہوا اور انھوں نے 8 رنز کے عوض 4 کھلاڑیوں کو آؤٹ کرتے ہوئے مہمان ٹیم کو 100 رنز سے قبل ہی پویلین کی راہ دکھادی ۔ علاوہ ازیں آسٹریلیا اور سری لنکا کے خلاف منعقدہ سیریز میں آشیش نہرا کے ہمراہ نئے کھلاڑیوں پر مشتمل جوڑی بمرا اور ہاردیک نے بھی اُمیدوں کو جگایا ہے ۔

متبادل ہو تو کرکٹ چھوڑنے کو تیار ہوں: آفریدی
شارجہ ۔17 فروری (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی  ٹوئنٹی20  کرکٹ ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی نے کہا ہے کہ پاکستان ٹیم میں میری کپتانی میں ہر کھلاری کو پورا موقع  دیا گیا کسی اور ایک دو میچوں کی کارکردگی پر خارج نہیں کیا گیا۔ کپتان ، کوچ اور سلیکشن کمیٹی کی جانب سے پوری حمایت ملی۔ انہوں نے کسی کا نام لئے بغیر کہا کہ کوئی ایسا کھلاڑی نہیں ہے جسے میری کپتانی میں پورے پورے مواقع نہ ملے ہوں اور ہم نے ان کی حمایت نہ کیا ہو۔ میری خواہش ہے کہ پاکستان سوپر لیگ میں مستقبل کے کھلاڑی  دکھائی دیں۔ اگر سینئر کھلاڑی سمجھتا ہے کہ اس کا وقت پورا ہوگیا ہے اور اس کی جگہ لینے کے لئے نئی صلاحیت موجود ہے تو سینئر کو کرکٹ چھوڑ دینی چاہیے۔ اگر میری جگہ لینے کے لئے باصلاحیت کھلاڑی موجود ہے تو میں اس کے لئے جگہ چھوڑنے اور کھیل کو خیرباد کہنے کے لئے تیار ہوں ۔

TOPPOPULARRECENT