Tuesday , August 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / دہلی کے پلے آف کی راہ میں آج گجرات حائل

دہلی کے پلے آف کی راہ میں آج گجرات حائل

کانپور۔9مئی (سیاست ڈاٹ کام) انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کے 10 ویں ایڈیشن میں پلے آف کی دوڑ سے باہر ہونے کے لئے کنارے پر ہی کھڑی دہلی ڈئیر ڈیولس کل اپنے اگلے مقابلے میں گجرات لائنز کے خلاف کرو یا مرو کے مقابلے میں اترے گی۔ظہیر خان کی کپتانی والی دہلی ڈئیر ڈیولس کے پاس اب بہت زیادہ موقع تو نہیں ہے لیکن پلے آف کی بچی آخری امید کے لیے اسے لیگ میں باقی تینوں میچ جیتنے لازمی ہیں اور صرف یہی نہیں باقی ٹیموں کے نتائج بھی اس کی اگلے مرحلے میں رسائی بھی طے کریں گے ۔بہترین کھیل رہی دہلی کو گزشتہ میچ میں ممبئی کے خلاف 146رنز سے شرمناک شکست ہوئی تھی۔وہ اب جدول میں 11 میچوں میں آٹھ نشانات کے ساتھ ساتویں نمبر پر ہے ۔سریش رینا کی گجرات لائنز پلے آف سے پہلے ہی باہر ہو چکی ہے اور 12میچوں میں آٹھ نشانات لے کر چھٹے مقام پر ہے ۔گجرات ابھی باقی ٹیموں کے مواقع بگاڑنے کا کام کر رہی ہے اور گزشتہ میچ میں اس نے موہالی میں پنجاب کو اسی کے میدان پر چھ وکٹ سے ہرا دیا تھا۔ پنجاب کی شکست سے دہلی کی توقعات کو یقینا اور حوصلہ ملا لیکن یہی الٹ پھیر اگر دہلی کا بھی ہوا تو پھر وہ مکمل طور ٹورنمنٹ سے باہر ہو جائے گی۔آئی پی ایل کے 10 برسوں میں دہلی کی کہانی ایک جیسی ہی رہی اور وہ ہر سال نئے کمبی نیشن کے ساتھ ٹورنمنٹ میں اترنے کے باوجود کوئی کمال نہیں دکھا سکی۔دہلی نے گزشتہ دو میچوں میں حیدرآباد اور پھر گجرات کو شکست دے کر مسلسل جیت درج کی تھی لیکن ممبئی کے خلاف وہ 66 رن پر ہی ڈھیر ہو گئی جس نے اس کے امکانات کو شدید جھٹکا دیا ہے ۔دہلی کے لئے ابتدائی میچوں میں سیم بلنگس اور سنجو سیمسن نے شاندار کھیل پیش کیالیکن پھر اس کا بیٹنگ آرڈر اس تال کو برقرار نہیں رکھ سکا اور اس کا نتیجہ ہے کہ ٹیم اب جدول میں کافی نیچے پہنچ گئی ہے ۔19 سال کے رشبھ پنت نے گزشتہ چند مقابلوں میں غیرمعمولی مظاہرے کرتے ہوئے انتظامیہ کے علاوہ ماہرین کی توجہ بھی اپنی جانب مبذول کروائی ہے اور ہندوستانی چمپئنز ٹرافی ٹیم میں بھلے ہی انہیں متبادل کھلاڑی کے طور پر منتخب کیا گیا ہو لیکن وہ قومی سلیکٹرز کی نظروں میں فی الحال چھائے ہوئے ہیں۔سیمسن اور پنت پر دہلی کا بیٹنگ شعبہ تاحال سب سے زیادہ انحصار کررہا ہے لیکن شریس ایر، کوری اینڈرسن، کرون نائر نے توقعات کے مطابق کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کیا۔دہلی کے لئے اس کی ناقص بولنگ تشویش کا باعث بھی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT