Monday , October 23 2017
Home / Top Stories / دیوالی پر پٹاخے جلانے 3گھنٹے کا وقت، ہائیکورٹ کا حکمنامہ

دیوالی پر پٹاخے جلانے 3گھنٹے کا وقت، ہائیکورٹ کا حکمنامہ

چندی گڑھ 13 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) پنجاب، ہریانہ اور چندی گڑھ کے مکین دیوالی کے تہوار پر صرف تین گھنٹے شام 6.30 تا رات 9.30 بجے تک پٹاخے جلاسکتے ہیں، یہاں ہائیکورٹ نے یہ حکمنامہ جاری کیا ہے جبکہ چند روز قبل سپریم کورٹ نے پڑوسی دہلی اور قومی دارالحکومت خطہ (این سی آر) میں پٹاخوں کی فروخت پر پابندی عائد کی تھی۔ پٹاخوں سے پیدا ہونے والی آلودگی پر فکرمند ہائیکورٹ نے آج حکام کے لئے متعدد ہدایات بھی جاری کئے جو ریاستوں اور مرکزی زیرانتظام علاقے میں تاجرین کو عارضی لائسنس جاری کرنے کے بارے میں ہیں۔ تاہم جسٹس اے کے متل اور جسٹس امیت راول کی ڈیویژن بنچ نے کہاکہ مستقبل کے لئے تفصیلی رہنمایانہ خطوط متعاقب ترتیب دیئے جائیں گے۔ عدالت نے واضح کردیا کہ یہ ہدایات پنجاب، ہریانہ اور چندی گڑھ میں صرف اِس سال کی دیوالی کے لئے قابل اطلاق ہیں۔ عدالت نے حکم دیا کہ پٹاخے صرف شام 6.30 تا رات 9.30 کے درمیان ہی جلائے جاسکتے ہیں۔ سینئر ایڈوکیٹ انوپم گپتا نے کہاکہ ڈپٹی کمشنرس، پولیس کمشنرس اور سینئر سپرنٹنڈنٹس آف پولیس کو اِس حکمنامہ پر سختی سے عمل آوری کو یقینی بنانے کی ہدایت دی گئی ہے۔ ہائیکورٹ نے پولیس کو یہ ہدایت بھی دی کہ اِن احکام کی تعمیل کے لئے معقول تعداد میں پی سی آر ویانس کی دستیابی یقینی بنائیں۔ ہائیکورٹ نے گزشتہ روز دونوں ریاستوں اور مرکزی زیرانتظام علاقے کو نوٹسیں جاری کرتے ہوئے اُن سے کہا تھا کہ پٹاخوں کی فروخت کے لئے جاری کردہ لائسنسوں کی تفصیلات پیش کریں۔

TOPPOPULARRECENT