Thursday , August 24 2017
Home / کھیل کی خبریں / دیپا بی ایم ڈبلیو سے پریشان ، تحفہ واپس کرنے کی خواہاں

دیپا بی ایم ڈبلیو سے پریشان ، تحفہ واپس کرنے کی خواہاں

Hyderabad: Cricket legend Sachin Tendulkar with Rio Olympics silver medalist shuttler P V Sindhu, bronze winner grappler Sakshi Malik, gymnast Dipa Karmakar, who won everyone's heart with her performance, and badminton coach Pullela Gopichand at a felicitation function at Gopichand Academy in Hyderabad on Sunday. Sindhu and Malik along with Gopichand and Karmakar were presented BMW cars at the function. PTI Photo (PTI8_28_2016_000057B)

حیدرآباد 13 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کی جمناسٹ دیپا کرماکر نے لکژری کار کی اپنے شہر اگرتلہ میں بہتر نگہداشت نہ کئے جانے کی شکایت کرتے ہوئے اُسے واپس کرنے اور اس کے مماثل رقم فراہم کردیئے جانے کی خواہش کی ہے۔ دیپا جس نے ریو اولمپکس میں ہندوستان کے لئے تاریخ ساز مظاہرہ کرتے ہوئے چوتھا مقام حاصل کیا تھا، جس پر حیدرآباد ڈسٹرکٹ بیڈمنٹن اسوسی ایشن کی جانب سے انھیں بی ایم ڈبلیو کار تحفۃً دی گئی تھی، لیکن کرماکر نے کہاکہ اگرتلہ شہر کی سڑکیں چھوٹی ہیں جبکہ شہر میں بی ایم ڈبلیو کا نہ ہی کوئی شوروم ہے اور نہ ہی کوئی سرویس سنٹر ہے۔ 23 سالہ دیپا کے کوچ بسویشور نندی نے کہا ہے کہ وہ ارباب مجاز سے اپیل کرتے ہیں کہ کار کی متبادل قیمت کھلاڑی کے اکاؤنٹ میں جمع کردیئے جائیں تو بہتر ہوگا۔ دریں اثناء حیدرآباد ڈسٹرکٹ بیڈمنٹن اسوسی ایشن کے صدر چامنڈیشوری ناتھ نے کہا ہے کہ وہ جمناسٹ سے بی ایم ڈبلیو کار کی وجہ سے ہونے والی مشکلات پر تبادلہ خیال کریں گے

اور جو بھی دیپا کے لئے بہتر ہوگا اُس کے متعلق فیصلہ کیا جائے گا۔ اُنھوں نے مزید کہاکہ کھلاڑیوں کو کار دراصل ان کی حوصلہ افزائی کے لئے دی گئی تھی اور اگر دیپا کو کار کی وجہ سے مسائل پیش آرہے ہیں تو اِس پر غور کیا جائے گا۔ جس وقت ریو اولمپکس میں میڈل حاصل کرنے والے ایتھلیٹس کو حیدرآباد میں بی ایم ڈبلیو کاریں تحفہ میں دی گئی تھیں اُس وقت ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق ماسٹر بلاسٹر سچن تنڈولکر بھی موجود تھے چونکہ وہ والمپکس میں شرکت کرنے والے ہندوستانی جتھے کے سفیر تھے۔ علاوہ ازیں گچی باؤلی کے پلیلا گوپی چند بیڈمنٹن اکیڈیمی میں یہ تقریب منعقد ہوئی تھی۔

TOPPOPULARRECENT