Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / ذاکر نائیک کے 18 کروڑ روپئے مالیتی اثاے ضبط

ذاکر نائیک کے 18 کروڑ روپئے مالیتی اثاے ضبط

انفورسمنٹ ڈائرکٹریٹ کی کارروائی، این آئی اے ہیڈکوارٹرس میں حاضری کیلئے دوسرا سمن جاری

نئی دہلی ۔ 20 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ نے متنازعہ مبلغ اسلام ذاکر نائیک کے خلاف رقمی ہیرپھیر کی تحقیقات کے ضمن میں ان کے اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن اور دیگر اداروں کے 18.37 کروڑ روپئے مالیتی اثاثوں کو ضبط کرلیا۔ اس دوران نیشنل انوسٹیگیشن ایجنسی (این آئی اے) نے نائک کے خلاف دوسری مرتبہ سمن جاری کرتے ہوئے انسداد دہشت گردی قانون کے تحت ان کے خلاف درج مقدمہ کے ضمن میں 30 مارچ کو اس کے اجلاس پر حاضری کی ہدایت کی ہے۔ اس ادارہ نے رواں ماہ کے اوائل میں پہلا سمن جاری کرتے ہوئے 14 مارچ کو حاضری کی ہدایت کی تھی۔ 51 سالہ ذاکر نائیک کی ممبئی میں واقع رہائش گاہ پریہ سمن روانہ کئے گئے ہیں۔ باور کیا جاتا ہیکہ گذشتہ سال ڈھاکہ کی ایک ہوٹل پر حملہ کرنے والے بعض دہشت گردوں کو متاثر کرنے سے متعلق الزام کے منظرعام پر آنے کے بعد ذاکر نائیک یہاں اپنی گرفتاری سے بچنے کیلئے سعودی عرب میں مقیم ہیں۔ این آئی اے نے گذشتہ سال نومبر میں نائیک اور ان کے چند ساتھیوں کے خلاف ایف آئی آر درج کیا تھا۔ فریشین سے مبلغ بننے والے ذاکر نائیک کے خلاف عوام کے مختلف گروپوں میں مذہب کی بنیاد پر نفرت و مخاصمت پھیلانے کے الزام کے تحت بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ ایک عہدیدار نے کہا کہ ایف آئی آر میں این آئی اے نے الزام لگایا ہیکہ نائک نے مسلم نوجوانوں کو غیرقانونی اور دہشت گرد سرگرمیوں کیلئے اکسایا تھا۔ بعدازاں مرکز نے نائیک کے اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن کو جو جنوبی ممبئی کے ڈونگری میں واقع ایک غیرسرکاری تنظیم ہے ممنوع قرار دیا تھا۔ دہلی ہائیکورٹ نے بھی حال ہی میں اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن پر فوری امتناع کے فیصلے کو جائز قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ یہ تنظیم اور اس کے صدر و ارکان غیرقانونی سرگرمیوں میں ملوث ہیں۔ ذاکر نائیک کی تقریروں پر برطانیہ، کینیڈا اور ملائیشیا میں امتناع عائد ہے۔ نائیک نے دہشت گردی سے متعلق سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے تمام الزامات کو مسترد کرتے ہوئے اپنی تنظیم پر عائد امتناع کی مخالفت کی ہے۔ انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ نے اپنی تازہ ترین کارروائی میں آج قانون انسداد رقمی ہیرپھیر کے تحت ایک عبوری حکم جاری کرتے ہوئے نائیک کے 9.41 کروڑ روپئے مالیتی میوچول فنڈ کو قرق دیا۔ دیگر پانچ بینک کھاتے منجمد کردیئے گئے جن میں نائیک کی تنظیم کے نام پر 1.23 کروڑ روپئے تھے۔ علاوہ ازیں اسلامک ایجوکیشن ٹرسٹ چینائی میں ایک اسکول بلڈنگ قرق کرلی گئی جس کی مالیت 7.05 کروڑ روپئے بتائی گئی ہے۔ اس کے علاوہ مسرز ہارمونی میڈیا پرائیویٹ لمیٹیڈ سے موسوم گودام کی عمارت بھی قرق کرلی گئی جس کی مالیت 68 لاکھ روپئے ہے۔

TOPPOPULARRECENT