Sunday , August 20 2017
Home / سیاسیات / رئیل اسٹیٹ بل راجیہ سبھا میں منظور

رئیل اسٹیٹ بل راجیہ سبھا میں منظور

نئی دہلی ۔ 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ریئل اسٹیٹ شعبہ کو مؤثر بنانے  شفافیت اور صارفین کے مفادات کا تحفظ کرنے کیلئے پیش کردہ بل آج راجیہ سبھا میں منظور کرلیا گیا۔ وزیر شہری ترقیات ایم وینکیا نائیڈو نے ریئل اسٹیٹ (ریگولیشن اینڈ ڈیولپمنٹ) بل 2015ء پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس کا مقصد خریداروں کے مفادات کا تحفظ اور شعبہ میں مزید شفافیت لانا ہے۔ کانگریس نے اس بل کی تائید کی اور ندائی ووٹ سے منظور کرلیا گیا۔ ریئل اسٹیٹ کے وسیع تر شعبہ کو باقاعدہ بنانے اور اس میں بہتری کی سمت اسے ایک اصلاحی قدم تصور کیا جارہا ہے۔ وینکیا نائیڈو نے ارکان کے سوالات پر کہا کہ یہ بل آج کی اہم ضرورت ہے۔ اس میں آئندہ مزید تبدیلیاں لائی جاسکتی ہیں۔ انہوں نے انا ڈی ایم کے ارکان سے بھی تائید کی خواہش کی جو بل کی مخالفت کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اس بل کے ذریعہ غیرمحسوب رقومات کو ریئل اسٹیٹ شعبہ میں لگانے پر روک لگے گی اور 70 فیصد رقم چیکس کے ذریعہ بینکس اکاونٹس میں جمع کرانا ہوگا۔
راجیہ سبھا انتخابات کیلئے انتونی اور ویریندر کمار کا پرچہ نامزدگی داخل
تروننتھا پورم ۔/10مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) سینئر کانگریس لیڈر اور سابق وزیر دفاع اے کے انتونی اور جنتا دل متحدہ کے ریاستی صدر ویریندر کمار نے آج راجیہ سبھا کے انتخابات کیلئے یو ڈی ایف امیدواروں کی حیثیت سے پرچہ نامزدگی داخل کردیا۔ دونوں لیڈروں نے سکریٹری قانون ساز اسمبلی مسٹر پی ڈی سرانگا دھرم کے اجلاس میں اپنا پرچہ نامزدگی پیش کیا۔ اس موقع پر یونائٹیڈ ڈیمو کریٹک فرنٹ کے قائدین بشمول چیف منسٹر دمن چنڈی ، صدر پردیش کانگریس وی ایم سدھیرن ، وزیر داخلہ رمیش چنتلہ، کیرلا کانگریس ( ایم ) لیڈر کے ایم متی اور آئی یو ایم ایل لیڈر اور ریاستی وزیر صنعتی پی کے کنہالی کٹی موجود تھے۔ کیرالہ سے راجیہ سبھا کیلئے 3نشستیں مخلوعہ ہورہی ہیں کیونکہ کانگریس لیڈر انتونی، سی پی ایم لیڈر س ٹی این میا اور کے این بالیا گوپال کی میعاد جاریہ ماہ ختم ہوجائیگی۔

TOPPOPULARRECENT