Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / راجستھان میں سرکاری اساتذہ کو عجیب و غریب ذمہ داری

راجستھان میں سرکاری اساتذہ کو عجیب و غریب ذمہ داری

کھلے مقامات پر رفع حاجت کرنے والوں کی تصاویر لینے کی ہدایت
کوئٹہ۔6 جون (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر وسوندھرا راجے کے آبائی ٹائون اور حلقہ اسمبلی جھلوار میں ڈسٹرکٹ ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ نے سرکاری اساتذہ سے کہا ہے کہ اپنے اپنے اسکولی علاقوں میں صبح سویرے 5 بجے پہنچ کر کھلے مقامات پر رفع حاجت سے باز رکھنے کے لئے عوام میں شعور بیدار کریں اور ضرورت سے فارغ ہونے والوں کی تصاویر لے کر محکمہ کو روانہ کریں۔ تاہم ٹیچرس تنظیموں نے ان احکامات کی تعمیل سے انکار کردیا اور کہا کہ یہ کام بالخصوص خاتون اساتذہ کے لئے نامناسب ہے۔ محکمہ تعلیمات کے ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ مجریہ احکامات کے متعلق اساتذہ کو ہر روز واٹس ایپ پر تصاویر لے کر ایک رپورٹ روانہ کرنا ہوگا اگر چیکہ یہ احکامات 3 جون کو جاری کئے گئے ہیں لیکن اسکولوں کے گرمائی تعطیلات کے بعد 21 جون سے عمل درآمد ہوگا۔ جھلوار ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر (ایلمنٹری) لکشمن کمار ملاوت نے بتایا کہ سرکاری اسکولوں کے صدور اور اسٹاف کو یہ ہدایت دی گئی ہے کہ اپنے اپنے علاقوں میں صبح 5 بجے دورہ کریں اور کھلے مقامات رفع حاجت سے باز رکھنے کے لئے طلباء اور ان کے والدین میں شعور بیدار کریں اور کھلے مقامات پر ضرورت سے فارغ ہونے والوں کی تصاویر اتارلی جائیں اور یومیہ رپورٹ کے ساتھ تصاویر متعلقہ عہدیدار کو واٹس ایپ پر روانہ کی جائے۔ انہوں نے بتایا کہ ضلع کے بعد اسکولوں میں ماہ فبروری سے یہ مہم شروع کردی گئی ہے جس کے مثبت نتائج برآمد ہونے پر باقی ماندہ اسکولوں کو شامل کیا جارہا ہے۔ ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر نے مزید بتایا کہ ترغیبی اقدامات کے طور پر ان طلباء کو نقد انعام بھی دیا جائے گا جن کے مکانات میں بیت الخلاء پائے جاتے ہیں۔ اگرچہکہ مذکورہ احکامات کے دائرہ کار میں خاتون اساتذہ کو شامل کیا گیا ہے لیکن ٹیچرس تنظیموں نے اس پر شدید ردعمل ظاہر کیا ہے اور یہ سوال کیا کہ اب اساتذہ کو تعلیم دینے کی بجائے کرنے کے لئے یہ کام رہ گیا ہے ؟ جھلواڑ ڈسٹرکٹ شکشک سنگھ کے سابق صدر اجئے جین نے کہا کہ اساتذہ کو اضافی ذمہ داری عائد کرنے سے معیار تعلیم اور نتائج متاثر ہوسکتے ہیں جبکہ یہ کام خاتون اساتذہ سے ہرگز زیب نہیں دیتا لیکن سرکاری ملازمین ہونے کے ناطے ہمیں احکامات کی تعمیل کرنی پڑتی ہے۔

TOPPOPULARRECENT