Saturday , September 23 2017
Home / سیاسیات / راجناتھ سنگھ سے کجریوال کی جے این یو مسئلہ پر بات چیت

راجناتھ سنگھ سے کجریوال کی جے این یو مسئلہ پر بات چیت

نئی دہلی ۔ 16 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال نے آج مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ سے ملاقات کرکے ان سے جواہر لال نہرو یونیورسٹی کی صورتحال پر بات چیت کی جس کا پس منظر طلبہ یونین کے صدر کی غداری کے مقدمہ میں گرفتاری کی ملاقات 15 منٹ جاری رہی جس کے دوران کجریوال نے جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے موجودہ ماحول پر تشویش ظاہر کی۔ افضل گرو کو پھانسی کی سزاء کے خلاف یونیورسٹی کے احاطہ میں احتجاجی جلسہ منعقد کیا گیا تھا۔ صدر جے این یو طلبہ یونین کنہیا کمار کو اس جلسہ کے بعد غداری کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا تھا۔ ذرائع کے بموجب چیف منسٹر نے مرکزی وزیرداخلہ سے کہا کہ اس مسئلہ کو پولیس کی طلبہ کے خلاف کارروائی کی بناء پر پیچیدہ بنایا گیا۔ مرکزی وزیرداخلہ نے کجریوال سے کہا کہ پولیس اس معاملہ کی تحقیقات کررہی ہے اور قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔ چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال نے مرکزی وزیرداخلہ سے دہلی حکومت کے چند انتظامی مسائل کے بارے میں بھی بات چیت کی۔ تاہم مرکزی موضوع جواہر لال نہرو یونیورسٹی کی صورتحال ہی تھی۔

 

جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے
وائس چانسلر نے پولیس طلب کی تھی
نئی دہلی ۔ 16 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) دہلی پولیس کو جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے انتظامیہ نے طلب کیا تھا اور وائس چانسلر نے انہیں احاطہ میں داخل ہونے کی دعوت دی تھی۔ ایک مکتوب میں جس پر 11 فبروری کی تاریخ ہے، اس کا انکشاف کیا گیا۔ یہ مکتوب یونیورسٹی کے رجسٹرار بھوپیندر زتشی نے ڈی جی پی نئی دہلی کو روانہ کیا تھا۔

 

علیگڑھ مسلم یونیورسٹی طلباء کا
احتجاجی مظاہرہ
علیگڑھ ۔/16فبروری،( سیاست ڈاٹ کام ) علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے طلبا ء نے جواہر لال نہرو یونیورسٹی میں پولیس کی بیجا کارروائی کے خلاف آج احتجاجی جلوس نکالا تاہم انہوں نے جے این یو میں ایک احتجاجی مظاہرہ کے دوران قوم دشمن نعرے لگانے کی مذمت کی۔ علیگڑھ یونیورسٹی کے طلباء جو کہ ہاتھوں میں پلے کارڈس تھامے ہوئے تھے پولیس کے خلاف زبردست نعرے بلند کئے۔ صدر جمہوریہ کو موسومہ ایک میمورنڈم میں ملک گیر سطح پر جامعات میں انتشار پیدا کرنے میں آر ایس ایس سے وابستہ تنظیموں کے رول کی تحقیقات کا مطالبہ کیا۔ صدر اے ایم یو ٹیچرس اسوسی ایشن پروفیسر معید بیگ نے کہا کہ آزمائش کی گھڑی کے وقت ہم سب جے این یو برادری کے ساتھ ہیں۔ جنرل سکریٹری اے ایم یو ایمپلائز یونین شمیم اختر نے کہا کہ اگرچیکہ ہم جے این یو احتجاج کے دوران قوم دشمن نعروں کی مذمت کرتے ہیں لیکن سوال یہ ہے کہ قابل اعتراض نعرے بلند کرنے والوں کی نشاندہی کیلئے آیا پولیس نے سنجیدگی سے تحقیقات کی ہے؟۔ مذکورہ احتجاجیوں نے الزام عائد کیا کہ جے این یونین کے خلاف غداری کا سنگین الزام عائد کرنے سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ دہلی پولیس، آر ایس ایس کی تنظیموں کے ہاتھوں کٹھ پتلی بن گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT