Tuesday , September 19 2017
Home / Top Stories / راجناتھ سنگھ نے ملک کی صیانتی صورتحال کا جائزہ لیا

راجناتھ سنگھ نے ملک کی صیانتی صورتحال کا جائزہ لیا

مشیر قومی سلامتی ،مرکزی معتمد داخلہ اور سراغ رسانی محکموں کے سربراہان شریک
نئی دہلی ۔ 16 اگست (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ نے آج تشدد زدہ جموں کشمیر کی صیانتی صورتحال کا جائزہ لیا اور سمجھا جاتا ہیکہ ہدایات دیں کہ صیانتی ارکان عملہ اور شہریوں کی ہلاکت سے گریز کیا جائے۔ اعلیٰ سطحی صیانتی عہدیداروں بشمول مشیر قومی سلامتی اجیت دوول، مرکزی معتمد داخلہ راجیو مہرشی اور سراغ رسانی محکموں کے سربراہوں نے اجلاس میں شرکت کی اور مرکزی وزیرداخلہ کو جموں و کشمیر کی صورتحال کی تفصیلات سے واقف کروایا جہاں حزب المجاہدین کے دہشت گرد برہان وانی کی ہلاکت کے بعد بے چینی پیدا ہوگئی تھی۔ ایک ماہ سے احتجاجی مظاہرے اور کرفیو جاری ہے۔ سی آر پی  ایف کے ایک کمانڈر ہلاک اور نیم فوجی تنظیم کے 9 ارکان عملہ زخمی ہوگئے۔ یہ واقعہ سرینگر کے مضافاتی علاقہ نوہٹا میں عسکریت پسندوں کے حملہ کے دوران پیش آیا۔ راجناتھ سنگھ نے عہدیداروں سے سرحدی ریاست میں جلد از جلد معمول کی صورتحال اور امن بحال کرنے اور شہریوں و صیانتی عملہ کے ارکان کی ہلاکتوں سے گریز کرنے کی ہدایت دی۔ مرکزی وزیرداخلہ کو خط قبضہ پر اری سیکٹر میں دراندازی کی بڑی کوشش کے بارے میں بھی بتایا گیا جس میں پانچ عسکریت پسند فوج کے ہاتھوں ہلاک کردیئے گئے۔ ذرائع کے بموجب وزیراعظم کو بحیثیت مجموعی ملک کی صیانتی صورتحال سے واقف کروایا۔ راجناتھ سنگھ نے آسام میں الفا عسکریت پسندوں کے مسلسل پانچ بم دھماکوں کے بارے میں بھی جو 15 اگست کو کئے گئے معلومات حاصل کیں۔ 5 اگست کو 14 افراد ہلاک اور 20 زخمی ہوگئے تھے جبکہ کوکراجھار ضلع کے علاقہ بالاجان میں این ڈی ایف بی کے شورش پسندوں نے حملہ کیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT