Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / ’راجیو گاندھی دوبارہ وزیراعظم منتخب ہوتے تو ایودھیا میں رام مندر تعمیر ہوجاتا‘

’راجیو گاندھی دوبارہ وزیراعظم منتخب ہوتے تو ایودھیا میں رام مندر تعمیر ہوجاتا‘

’بابری مسجد کا تالہ انہوں نے ہی کھلوایااور شیلانیاس کی اجازت بھی دی تھی ‘ سمینار میں سبرامنیم سوامی کا ’لکچر‘

ممبئی ۔ /17 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی اگرچہ نہرو گاندھی خاندان کے کٹر ناقد و مخالف رہے ہیں اور گاندھی خاندان کے خلاف حالیہ عرصہ کے دوران پیدا کی گئی قانونی مصیبتوں کے پس پردہ کارفرما بھی رہے ہیں لیکن آج انہوں نے ایودھیا تنازعہ کی یکسوئی میں راجیو گاندھی کی بہترین کوششوں ‘ کی بھرپور ستائش کی اور کہا کہ اگر وہ (راجیو گاندھی) دوسری میعاد کیلئے منتخب ہوتے تو رام مندر بھی بنائے ہوتے ۔ سبرامنیم سوامی نے جو آج یہاں ’’ایودھیا میں رام مندر کیوں اور کیسے‘‘ کے زیرعنوان ایک سمینار سے خطاب کررہے تھے کہا کہ ’’میں راجیو گاندھی کو بہت اچھی طرح جانتا ہوں ۔

اگر وہ پھر ایک مرتبہ وزیراعظم منتخب ہوتے تو یقیناً اسی مقام پر رام مندربنادیئے ہوتے (جہاں منہدمہ بابری مسجد کھڑی تھی) انہوں (راجیو گاندھی) نے ہی رام مندر (بابری مسجد) کا تالہ کھلوایا تھا اور رام مندر کی تعمیر کیلئے شیلا نیاس (سنگ بنیاد) کی اجازت دی تھی ‘‘ ۔ بی جے پی لیڈر سوامی نے نیشنل ہیرالڈ کیس میں کانگریس کی صدر سونیا گاندھی اور ان کے بیٹے و نائب صدر راہول کو عدالت کے کٹھیرے میں کھینچا تھا لیکن آج انہوں نے کہا کہ راجیو گاندھی بھی رام راجیہ کے نظریہ کی پاسداری شروع کرچکے تھے لیکن ان کی بے وقت موت کے بعد حالات بدل گئے ۔

سبرامنیم سوامی نے کہا کہ بابری مسجد ۔ رام جنم بھومی کیس کی سپریم کورٹ میں روزانہ سماعت پراتفاق رائے پیدا کرنے کیلئے وہ مساعی میں مصروف ہیں ۔ سابق مرکزی وزیر سوامی نے مزید کہا کہ وہ اس مقدمہ میں شامل مسلم قائدین سے بھی اپنی اس تجویز پر بات چیت کررہے ہیں اور انہوں (مسلم قائدین) نے حتی کہ اصولی طورپر اس تجویز سے اتفاق بھی کیا ہے ۔ لیکن عدالت میں اس تجویز کی تائید کیلئے جب ان (مسلم قائدین) کی باری آئی تو وہ خاموش ہوگئے ۔ بی جے پی لیڈر نے توقع ظاہر کی کہ سپریم کورٹ کا حتمی فیصلہ ہی ایودھیا کے متنازعہ مقام پر رام مندر کی تعمیر کی راہ ہموار کرسکتا ہے ۔
ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ترقیاتی کام حکومت کی ذمہ داری ہیں اور حکومت بہترین انداز میں اپنا کام کررہی ہے ۔ ان کاموں پر حکومت توجہ دے گی ۔ مجھے (مندر کی تعمیر کیلئے ) میرا کام کرنے دیجئے ‘‘ ۔

TOPPOPULARRECENT