Wednesday , August 16 2017
Home / شہر کی خبریں / راشن کارڈس اور معمرین کے وظائف کی منسوخی کے خلاف احتجاج

راشن کارڈس اور معمرین کے وظائف کی منسوخی کے خلاف احتجاج

حکومت کو سخت انتباہ ، تلگو دیشم پارٹی کے قائد سرینواس اور دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔24اکٹوبر(سیاست نیوز) حیدرآباد اور اس کے مضافات میں سفید راشن کارڈس کی بلاتحقیق منسوخی اور نئے راشن کارڈس کی اجرائی میںتاخیر ‘ عمررسیدہ افراد کے وظائف کی منسوخی اور دیگرمسائل پرتلگودیشم گریٹر حیدرآباد یونٹ کی جانب سے دفتر کلکٹر حیدرآباد کے روبر و احتجاجی مظاہرہ کیاگیا۔کنونیر ٹی ڈی پی گریٹر حیدرآباد ایم این سرینواس رائو کی قیادت میں آر چندرشیکھر ریڈی‘ ارون کمار گوڑ’ سارنگا پانی‘بجرنگ شرما‘ علی بن سعید الگتمی‘ امجد خان کاروان‘ حبیب العیدروس‘ محمد وحید ، کے پربھاکر کے علاوہ سینکڑوں کارکنوں نے حیدرآباد کلکٹردفتر کاگھیرا ئو کر کے حیدرآباد کی غریب عوام سے انصاف کا مطالبہ کیا۔ ایم این سرینواس نے ریاستی حکومت کو اپنی شدیدتنقید کانشانہ بنایا اور محکمہ مال کے عہدیدار وں پر بلاتحقیق غریب عوام کے راشن کارڈس منسوخ کرنے کا الزام عائد کیا۔ سرینواس نے کہاکہ حکومت کی جانب سے غریب عوام کوسہولتیں فراہم کرنے کے بلند بانگ دعوے کئے جارہے ہیںمگر حقیقت اس کے برخلاف ہے۔ عمررسید ہ اور معذورین کے وظائف بھی بلاتحقیق منسوخ کرنے کا حکومت پر الزام عائد کیا۔ شہری انتظامیہ پوری طرح مفلوج ہے اور متعلقہ وزراء بھی نمائندگی کے لئے موجود نہیں ہیں۔ تلگودیشم عوامی مسائل کے حل کے لئے اپنی جدوجہد کو جاری رکھے گی۔ انتخابی وعدوںسے انحراف کابھی حکومت تلنگانہ پر الزام عائد کیا۔جب کہ اقلیتوں کو بارہ فیصد تحفظات کی فراہمی کا وعدہ ڈھائی سال کی تکمیل کے بعد بھی حکومت پورا نہیںکرسکی۔ ایم این سرینواس نے مخالف حکومت نعرے لگاتے ہوئے کہاکہ عوامی مسائل کی یکسوئی تک تلگودیشم ریاستی سطح پر حکومت تلنگانہ کو گھیرنے کا اعلان کیا ۔ قبل ازیں ایم این سرینواس کی قیادت میں عابڈس جی پی او تاحیدرآباد کلکٹر حیدرآباد دفتر تک ایک ریالی بھی نکالی گئی جس میںحکومت اور چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو کے خلاف نعرے بازی کی گئی ۔

TOPPOPULARRECENT