Sunday , September 24 2017
Home / ہندوستان / رامائن میوزیم کی تعمیر کیلئے مرکزی حکومت کی پیشقدمی

رامائن میوزیم کی تعمیر کیلئے مرکزی حکومت کی پیشقدمی

وزیر سیاحت کا آج دورۂ ایودھیا، ہندوتوا عناصر کی خوشنودی حاصل کرنے کی کوشش

نئی دہلی۔17 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر سیاحت و ثقافت مہیش شرما کل ایودھیا کا دورہ کرتے ہوئے مجوزہ رامائن میوزیم کے مقام (اراضی) کا معائنہ کریں گے ان کا یہ اقدام، اترپردیش میں اسمبلی انتخابات کے پیش نظر ہندوتوا موافق عناصر کی دلجوئی کے لئے ایک کوشش کے طور پر دیکھا جارہا ہے۔ تاہم منیش شرما نے ان کے دورہ کے پس پردہ سیاسی مقاصد کارفرما ہونے سے انکار کردیا اور بتایا کہ یہ مودی حکومت کے فروغ سیاحت کے منصوبوں کا ایک حصہ ہے جسے سیاست بالخصوص انتخابات والی ریاستوں سے جوڑا نہ جائے۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ میرے دورہ ایودھیا کا اترپردیش اسمبلی انتخابات سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ میں یہاں وزیر سیاحت کی حیثیت سے دورہ کررہا ہوں اور اسے سیاست سے مربوط نہ کیا جائے بلکہ یہ ایودھیا اور ملک بھر میں فروغ سیاحت کے لئے حکومت کی کوششوں کا ایک حصہ ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مذکورہ میوزیم کا قیام رامائن سرکیوٹ کا ایک حصہ ہوگا جس کے لئے مرکزی نے 225 کروڑہا روپئے منظور کئے ہیں۔ اور اس میں 151 کروڑ روپئے ایودھیا کیلئے مختص کئے گئے ہیں اور یہ مقام، سرکیوٹ کا محور ہوگا۔ مسٹر مہیش شرما نے کہا کہ رام، سینکڑوں لوگوں کے دل میں رہتے ہیں اور وزیر سیاحت کی حیثیت سے یہ دیکھنا ضروری ہے کہ سیاحت کے نقطہ نظر سے ایودھیا اور رامائن سرکیوٹ کی ترقی کس طرح انجام دی جاسکتی ہے۔ انہوں نے  کہا کہ حکومت نے مذہبی سیاحت کو فروغ دینے کے لئے 3 سرکیوٹس، رامائن سرکیوٹ، کرشنا سرکیوٹ اور بدھسٹ سرکیوٹ کی نشاندہی کرلی گئی ہے۔ دریں اثناء باوثوق ذرائع نے بتایا کہ ریاستی حکومت نے رامائن میوزیم کی تعمیر کیلئے 25 ایکڑ کی اراضیات (پلاٹ) کی نشاندہی کرلی ہے جوکہ متنازعہ رام جنم بھومی۔بابری مسجد کامپلکس سے 15 کیلومیٹر دور واقع ہے۔ مرکزی وزیر شرما، کل دورہ کے موقع پر رامائن سرکیوٹ ایڈوائزری بورڈ کا اجلاس طلب کرلیا ہے تاکہ نیپال اور سری لنکا میں رامائن سے وابستہ یادگاروں اور مقامات کو ایودھیا کے میوزیم سے باہم مربوط کرنے کے راستوں (روٹس) پر تبادلہ خیال کیا جاسکے۔ گوکہ بی جے پی نے یہ ادعا کیا ہے کہ اترپردیش کے انتخابات میں رام مندر سیاسی ایجنڈہ نہیں ہوگا لیکن مجوزہ رامائن میوزیم اور اس سے متعلق سرگرمیاں ہندوتوا عناصر کی خوشنودی کے لئے یہ قدم اٹھایا جارہا ہے۔ دسہرہ کے موقع پر وزیراعظم نریندر مودی نے روایت سے انحراف کرتے ہوئے لکھنو کے رام لیلہ، میں شرکت اور اپنی تقریر کے اختتام پر جئے شری رام کہا تھا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT