Tuesday , June 27 2017
Home / شہر کی خبریں / رباط کیلئے اندرون ہفتہ قرعہ اندازی، رمضان سے قبل ٹیکہ اندازی کا پروگرام

رباط کیلئے اندرون ہفتہ قرعہ اندازی، رمضان سے قبل ٹیکہ اندازی کا پروگرام

عازمین حج کا دوسرا تربیتی اجتماع،پروفیسر ایس اے شکور‘ مفتی صادق محی الدین اور مولانا جعفر پاشاہ کا خطاب
حیدرآباد 7مئی ( پریس نوٹ )  اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے کہا ہے کہ سائینس و ٹیکنالوجی کی ترقی کے ساتھ ریاستی حج کمیٹی بھی ترقی کرتی جارہی ہے اور اس کی خدمات بھی انفارمیشن ٹیکنالوجی سے مربوط کی جارہی ہے۔ ریاستی حج کمیٹی کے زیر اہتمام آج جامع مسجد دارالشفا میں عازمین حج کے دوسرے تربیتی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حج امور  کے بارے میں وقتاً فوقتاً معلومات کی فراہمی کے لئے حج کمیٹی کی ویب سائیٹ کو اپ ڈیٹ کیا جارہا ہے جس سے عازمین استفادہ کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عازمین خوش نصیب ہیں کہ ان کو حج کمیٹی کے توسط سے سفر حج کا موقعہ ملا ہے اور ان کو اللہ نے بلایا ہے۔ ویٹنگ لسٹ کے تعلق سے تفصیلات بتاتے ہوئے انہو ںنے کہا کہ تاحال 103 افراد نے عزم حج منسوخ کردیا ہے‘  اس کے علاوہ مزید کچھ اور نشستیں دستیاب ہوں گی اور ویٹنگ لسٹ کے لحاظ سے انہیں الاٹ کیا جائے گا۔ عازمین درمیانی آدمیوں سے چوکس رہیں‘ کوئی درمیانی آدمی کچھ نہیں کرسکتا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے کہا کہ رباط کے لئے عنقریب قرعہ اندازی ہوگی ‘ جس کے لئے علیحدہ درخواست دینے کی ضرورت نہیں ہے‘اور صرف قرعہ اندازی میں منتخب ہونے والوں کو ہی رباط میں جگہ ملے گی‘ اس معاملہ میں بھی درمیانی آدمیوں سے چوکس رہیں۔ عازمین کی ٹیکہ اندازی رمضان سے قبل ہوگی‘ جس کا بہت جلد اعلان کیا جائے گا اور عازمین کو انفرادی طور پر اطلاع بھی دی جائے گی۔ جس مقام کے عازمین ہیں ان کو اسی مقام پر ویکسین لینا ہوگا۔یہ کافی قیمتی ویکسین ہوتا ہے اور مقررہ تعداد میں اس مقام کو روانہ کیا جاتا ہے۔ انہو ںنے عازمین کو صبر و سکون اور ڈسپلن کے ساتھ مناسک ادا کرنے کا مشورہ دیا اور کہا کہ جب وہ حج کے لئے جارہے ہیں تو یہاں کے چھوٹے موٹے معاملات کو یہیں چھوڑ دیں ‘ فون کا استعمال نہ کریں اور حرم اور دیگر مقامات پر سیلفی اور فوٹوز لینے سے گریز کریں وہ اللہ کی رضا مندی کے لئے حج پر جارہے ہیں نام و نمود کے لئے نہیں جارہے ہیں۔ اجتماع کی کارروائی کا آغاز حافظ و قاری شیخ محمد نصرت احمد کی   قرأت کلام پاک اور  جناب محمد ناصر الدین کے ہدیہ نعت سے ہوا۔ مولانا مفتی صادق محی الدین فہیم نے عمرہ اور حج کے مناسک تفصیل کے ساتھ بیان کئے اور کہا کہ دنیا کے مختلف ممالک سے جو حجاج کرام آتے ہیں وہ آفاقی کہلاتے ہیں۔ حرم میں نماز کا ثواب ایک لاکھ ہے اور اگر کوئی غلطی یا گناہ سرزد ہوجائے تو اس کا وبال بھی بہت زیادہ ہوتا ہے۔ انہوں نے حج کے فرائض اور واجبات بھی بیان کئے اور کہا کہ بیت اللہ کا طواف شروع ہوتا ہے حجر اسود سے۔ رکن یمانی بہت مبارک جگہ ہے یہاں جو دعأ کی جاتی وہ قبول ہوتی ہے۔ یہاں کی جو مسنون دعائیں ہیں ان کی فضیلت ہے‘اگر یہ یاد نہ ہوں تو جو دعأ چاہیں کرسکتے ہیں۔ خواتین کو اللہ تعالی ٰ نے بہت سی رعایتیں دی ہیں۔طواف کے لئے باوضو ہونا ضروری ہے اور طواف کے دوران بیت اللہ کی طرف نہیں دیکھنا ہے‘ جو لوگ طواف کے دوران سیل فون سے فوٹو لیتے ہیں ان کا طواف نہیں ہوتا۔ عازمین اس لعنت سے اپنے کو بچائیں۔ ہر جگہ دعا کا اہتمام کیا کریں۔ مولانا حسام الدین جعفر پاشاہ دارالعلوم حیدرآباد نے حج و عمرہ کے فضائل بیان کئے۔مولانا مفتی محمد حسین علی پاشاہ نے زیارت روضۃ نبوی ﷺ کے فضائل و آداب بیان کئے ۔ مولانا مفتی محبوب شریف نظامی نے سوالات کے جوابات دیئے۔جناب عرفان شریف نے آخر میں شکریہ ادا کیا۔ الحاج محمد فاروق علی حسامی نے احرام باندھنے کا طریقہ سمجھاتے ہوئے اس کا عملی مظاہرہ کیا اور اس کی شرائط بیان کیں۔ جناب محمد عرفان حسامی‘ جناب عمران حسامی نے انتظامات کی نگرانی کی۔  اجتماع میں عازمین حج کی کثیر تعداد شریک تھی‘ خواتین کے لئے علیحدہ انتظام کیا گیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT