Thursday , August 24 2017
Home / عرب دنیا / رمدی کے مرکزی علاقے پر عراقی فوج کا قبضہ

رمدی کے مرکزی علاقے پر عراقی فوج کا قبضہ

بغداد ۔ 28 ڈسمبر (سیاسست ڈاٹ کام) عراق میں حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ عراقی فوج نے دارالحکومت بغداد کے مغرب میں واقع شہر رمادی کے مرکزی حصے کو شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ کے قبضے سے مکمل طور پر آزاد لیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ اب فوج علاقے میں اپنی پوزیشن مضبوط کر رہی ہے تاہم صوبہ انبار کے گورنر کے ایک ترجمان نے کہا ہے کہ شہر میں اب بھی ’کچھ علاقوں میں مزاحمت موجود ہے۔‘ عراقی سکیورٹی ذرائع نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ دولتِ اسلامیہ کے خودکش بمبار شہر کے وسط میں واقع سرکاری عمارتوں کے اس کامپلکس میں اب بھی موجود ہیں جس پر قبضے کا عراقی حکومت کی جانب سے دعویٰ کیا گیا تھا۔ اس عمارت کو دولتِ اسلامیہ کے شدت پسند ہیڈکوارٹر کے طور پر استعمال کر رہے تھے۔ کہا جا رہا ہے کہ دولتِ اسلامیہ کے جنگجو اب شہر کے شمال مشرق کی طرف فرار ہو گئے ہیں۔ عراقی حکومت کی افواج جنھیں غیرملکی اتحادی افواج کی فضائی مدد حاصل ہے کئی ہفتوں سے سنّی اکثریتی آبادی والے اس شہر سے دولتِ اسلامیہ کا قبضہ چھڑوانے کے لیے کوشاں ہیں۔ رمادی پر جاریہ برس مئی میں دولتِ اسلامیہ کے شدت پسندوں نے قبضہ کیا تھا اور اسے عراقی فوج کے لیے ایک شرمناک شکست کے طور پر دیکھا گیا تھا۔ حالیہ دنوں میں عراقی فوج نے ایسی گلیوں اور عمارتوں سے گزر کر شہر کے مرکز کی جانب راستہ بنایا جن میں پوشیدہ بم نصب تھے اور راستے میں کئی اضلاع کو اپنے قبضے میں بھی لیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT