Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / رمضان المبارک کے آغاز سے قبل مکہ مسجد کیلئے ایک اور امام کا تقرر

رمضان المبارک کے آغاز سے قبل مکہ مسجد کیلئے ایک اور امام کا تقرر

چیف منسٹر سے عنقریب منظوری ، سیاست کی نیوز کا غیر معمولی اثر
حیدرآباد۔ 12 مئی (سیاست نیوز) تاریخی مکہ مسجد کے لیے ایک اور امام کے تقرر کی فائل کو توقع ہے کہ رمضان المبارک سے قبل چیف منسٹر کی منظوری حاصل ہوجائے گی جس کے بعد مسجد میں تراویح کے اہتمام کا مسئلہ بآسانی حل ہوجائے گا۔ فی الوقت مکہ مسجد میں تین دہوں کے لیے صرف ایک امام دستیاب ہے۔ دوسرے امام نے رمضان میں عمرہ کو روانگی کے سلسلہ میں رخصت کی درخواست پیش کردی ہے۔ مکہ مسجد کے امام کے عدم تقرر کے سلسلہ میں روزنامہ سیاست میں شائع شدہ خبر پر فوری کارروائی کرتے ہوئے سکریٹری اقلیتی بہبود نے چیف منسٹر دفتر سے ربط قائم کیا اور انہیں مسجد میں پیش آنے والے مسائل سے واقف کروایا۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر رائو جو آنکھ کے آپریشن کے بعد نئی دہلی میں آرام کررہے ہیں، آج رات حیدرآباد واپس ہوں گے اور یہ فائل انہیں پیش کی جائے گی۔ سکریٹری اقلیتی بہبود نے یقین ظاہر کیا کہ بہت جلد حافظ عبداللطیف کے مستقل امام کے تقرر کے احکامات جاری کردیئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے دفتر سے فائل پر مثبت ردعمل کا اظہار ہوا ہے۔ مکہ مسجد میں ہمیشہ ایک خطیب کے علاوہ دو امام ہوا کرتے ہیں۔ قاری عبداللہ قریشی الازہری کے سانحہ ارتحال کے بعد مسجد میں صرف دو امام ہیں۔ رمضان میں تراویح کے لیے تین اماموں میں تین دہے الاٹ کیئے جاتے ہیں۔ عمر جلیل نے بتایا کہ نئے امام کے تقرر کے بعد دوسرا دہا حافظ عبداللطیف کو الاٹ کیا جائے گا۔ پہلے دہے میں چاند رات سے خطیب و امام حافظ و قاری مولانا محمد رضوان قریشی روزانہ تین پارے سنائیں گے۔ تیسرے دہے میں روزانہ پانچ پاروں کا اہتمام کیا جائے گا اس کے علاوہ تہجد میں بھی قرآن سنایا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT